Breaking News
Home / تازہ ترین / اکشر دھام مندر حملہ مقدمہ سے باعزت رہائی پانے والے مولانا عبد اللہ میاں کا انتقال

اکشر دھام مندر حملہ مقدمہ سے باعزت رہائی پانے والے مولانا عبد اللہ میاں کا انتقال

احمد آباد( ہرپل نیوزِ پریس ریلیز)مولانا عبد اللہ میاں یاسین میاں منصوری احمد آباد (گجرات)کا علالت کے بعد انتقال ہوگیا۔ انا للہ و انا الیہ راجعونآپ عوامی اور رفاہی کاموں میں پیش پیش رہتے تھے۔ احمد آباد کے زلزلہ اور سیلاب کے موقع پر آپ نے راحت رسانی اور ریلیف کے کاموں میں بڑھ چڑھ کر حصہ لیا۔2002گجرات کے بھیانک مسلم کش فساد کے بعدمتاثرین میں ریلیف کی تقسیم میں آپ بہت سر گرم رہے،لیکن آپ کو ایک سمجھی بوجھی سازش کے تحت اکشر دھام مندر حملہ (احمد آباد)کے الزام میں گرفتار کر لیا گیا،اور آپ کو دس سال کی سزا ہوئی،لیکن آٹھ سال کے بعد ہی سپریم کورٹ نے ضمانت پر رہا کردیا۔مرحوم کی جرأت اور راست گوئی کا عالم یہ تھا کہ بے بنیاد الزام میں گرفتاری کے بعدپولس کے ہر طرح کے مظالم کو برداشت کر لیا لیکن پولس اور حکام کے سامنے اپنا اقبالیہ بیان نہیں دیا۔رہائی کے بعد آپ کو ایک مہلک بیمار ی کا عارضہ پیش آگیا،جس سے آپ کو شفاء نہ ملی اور اسی بیماری میں آپ اپنے مالک حقیقی سے جاملے۔مرحوم کی نماز جنازہ صبح دس بجے ادا کی گئی اورتدفین احمد آباد ہی میں ”موسیٰ سہاگ قبرستان“ میں سینکڑوں سوگواروں کی موجودگی میں عمل میں آئی۔ مرحوم کے انتقال پر جمعیۃ علماء مہاراشٹر نے پریس ریلیز جاری کر کےاپنے گہرے رنج کا اظہار کیا ہے ۔  صدر مولانا مستقیم احسن اعظمی،جنرل سکریٹری مولانا حلیم اللہ قاسمی و سکریٹری قانونی امداد کمیٹی الحاج گلزار احمد اعظمی اور دیگر نے ان کے اہل خانہ سے تعزیت کی۔ اور مر حوم کی مغفرت و بلندیئ درجات کے لئے دعافرمائی ہے،ساتھ ہی ائمہ مساجد،ذمہ داران مدارس عربیہ اور عامۃ المسلمین سے ایصال ثواب کے اہتمام کی درخواست کی ہے۔

The short URL of the present article is: http://harpal.in/SnSXX

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا. ضرورت کے کھیتوں ک* نشان لگا دیا گیا ہے