Breaking News
Home / تازہ ترین / ای وی ایم کو لے کر 'آپ' کا احتجاج، وی وی پیٹ سے الیکشن کرانے کا مطالبہ

ای وی ایم کو لے کر 'آپ' کا احتجاج، وی وی پیٹ سے الیکشن کرانے کا مطالبہ

نئی دہلی(ہرپل نیوز)11 مئی۔ انتخابات میں مسلسل شکست کا سامنا کر رہی عام آدمی پارٹی کے کارکن ای وی ایم میں مبینہ گڑبڑی کے خلاف الیکشن کمیشن ہیڈ کوارٹر کے باہر مظاہرہ کرنے پہنچ گئے ہیں۔ اس کی قیادت پارٹی میں دہلی کے نئے کنوینر بنائے گئے گوپال رائے کر رہے ہیں۔ پارٹی کارکن ای وی ایم میں گڑبڑی اور ووٹوں کی چوری، جمہوریت کا قتل بند کرو کی نعرے بازی کر ہنگامہ کر رہے ہیں۔ رائے کے ساتھ سینکڑوں کارکن ہیں۔ پولیس ان سے چلے جانے کے لئے کہہ رہی ہے۔ گوپال رائے نے کہا کہ الیکشن کمیشن ہمیں اپنی مشینیں دے، ہمارے انجینئر اسے ہیک کرکے دکھائیں گے۔ انہوں نے پرچيوں سے انتخابات کرانے کی بھی مانگ رکھی ہے۔ پرچيوں سے الیکشن کروا کر ای وی ایم سے موازنہ کرکے دیکھ لیں۔ گوپال رائے مظاہرہ کے بعد کمیشن کو میمورنڈم دیں گے۔ اس میں آگے کے تمام انتخابات میں ووٹ ویریفیبل پیپر آڈٹ ٹریل (وی وی پیٹ) مشین سے كروانے اور ہر الیکشن کے بعد 25 فیصدی وی وی پیٹ کی بھی گنتی کرنے کا مطالبہ شامل ہوگا۔ آپ کارکنوں کو الیکشن کمیشن پہنچنے سے روکنے کے لئے پٹیل چوک اور سینٹرل سیکرٹریٹ میٹرو اسٹیشن کے دروازے بند کر دیے گئے ہیں۔ پولیس نے پٹیل چوک اور ارد گرد کی تمام سڑکیں سیل کر دی ہیں۔ پولیس نے وہاں پر سیکورٹی کے سخت انتظامات کئے ہیں۔ عام آدمی پارٹی اسمبلی کا خصوصی اجلاس بلا کر ایوان میں ای وی ایم جیسی نظر آنے والی مشین کو ہیک کرنے کی ڈیمو دکھا چکی ہے۔ لیکن کمیشن الزامات کو مسترد کر چکا ہے۔ کمیشن کا کہنا ہے کہ ای سی آئی (الیکشن کمیشن آف انڈیا) -ای وی ایم کو کوئی ہیک نہیں کر سکتا۔

الیکشن کمیشن کا چیلنج، کوئی مشین ہیک کر دکھائے

ای وی ایم میں گڑبڑی کے الزامات کے بعد الیکشن کمیشن جمعہ یعنی 12 مئی کو سیاسی جماعتوں کے ساتھ ملاقات کرے گا۔ اس کے لئے سات قومی اور 49 ریاستی سطح کی پارٹیوں کو بلایا ہے۔ کمیشن میٹنگ کے بعد چھیڑچھاڑ کو ثابت کرنے کے لئے کھلا چیلنج یعنی ہیكاتھن منعقد کرے گا۔ کمیشن اس کے ذریعے اپنے اوپر لگ رہے الزامات کو غلط ثابت کرنے کی کوشش میں مصروف ہے۔ معلوم ہو کہ پانچ ریاستوں کے اسمبلی انتخابات کے بعد پہلی بار عام آدمی پارٹی، بہوجن سماج پارٹی، کانگریس اور سماجوادی پارٹی سمیت 16 جماعتوں نے ای وی ایم میں گڑبڑی کی شکایت کی ہے۔

The short URL of the present article is: http://harpal.in/XdRvq

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا. ضرورت کے کھیتوں ک* نشان لگا دیا گیا ہے