Breaking News
Home / اہم ترین / بنگلہ دیش میں جماعت اسلامی کے خلاف کریک ڈاون ۔امیر جماعت سمیت 9 قائدین پابند سلاسل

بنگلہ دیش میں جماعت اسلامی کے خلاف کریک ڈاون ۔امیر جماعت سمیت 9 قائدین پابند سلاسل

ڈھاکہ(اہرپل نیوز)ایجنسی،11؍اکتوبر۔شیخ حسینہ واجد حکومت کی جماعت اسلامی بنگلہ دیش کے خلاف کارروائیاں جاری ہیں، امیر جماعت مقبول احمد اور سیکرٹری جنرل سمیت نو رہنماؤں کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔خبررساں ایجنسی کے مطابق بنگلہ دیش کے سیکیورٹی و قانون نافذ کرنے والے اداروں نے جماعت اسلامی کے خلاف کارروائیاں تیزکردیں ہیں ۔اس بار کارروائی کرتے ہوئے جماعت اسلامی بنگلہ دیش کے رہنماؤں مقبول احمد سمیت9افراد کو بغیر کسی الزام کے گرفتار کئے جانے کی خبر ہے۔گرفتارافراد میں سیکریٹری جنرل شفیق الرحمان بھی شامل ہیں۔خدشہ ظاہر کیا جارہا ہے کہ جماعت اسلامی کے گرفتار مزید قائدین کا بھی اس ٹربیونل کے ذریعے ٹرائل کی کوشش کی جائے گی۔ بتایا گیا ہے کہ جماعت اسلامی نے زیر حراست اپنے رہنما کی رہائی کے لئے ملک بھر میں احتجاجی مظاہروں کی اپیل کی ہے۔ بنگلہ دیشی حکومت جماعت اسلامی پر الزام عائد کرتی ہے کہ وہ ملک میں عسکریت پسندی کو ہوا دے رہی ہے۔خبر رساں ادارے اے ایف پی کے مطابق پولیس نے ڈھاکا کے شمالی علاقے اْتارا میں ایک مکان پر چھاپہ مار کر اپوزیشن پارٹی جماعت اسلامی کے نو اراکین کو گرفتار کیا ہے۔جماعت اسلامی کے 9 رہنماؤں کو عدالت میں پیش کیا گیا۔ پولیس نے بتایا کہ جس وقت چھاپا مار کر جماعت کے رہنماؤں کو گرفتار کیا گیا اس وقت وہ تخریب کاری کی سرگرمیوں کی منصوبہ بندی کررہے تھے۔ پولیس کی درخواست پر عدالت نے جماعت اسلامی کے رہنماؤں کو 10 روزہ ریمانڈ پر پولیس کے حوالے کردیا۔جماعت اسلامی نے الزامات کی تردید کرکے گرفتاریوں کے خلاف احتجاج کا اعلان کیا ہے۔ جماعت اسلامی نے کہا کہ اس کی قیادت غیر رسمی ملاقات کررہی تھی کہ پولیس نے اچانک چھاپہ مار کر انہیں گرفتار کرلیا۔ جماعت کے رہنما مجیب الرحمن نے گرفتاریوں کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ جنگی جرائم کے مقدمات میں اعلیٰ رہنماؤں کو پھانسیاں دینے کے بعد اب جماعت کو قیادت سے محروم کرنے کی سازش کی جارہی ہے۔ حکومت محض اپنے اقتدار کو طول دینے کےلیے ہمارے بے گناہ رہنماؤں اور کارکنوں کو گرفتار کررہی ہے۔ اب تک یہ تو نہیں بتایا گیا ہے  کہ ان رہنماؤں کو کس الزام کے تحت گرفتار کیا گیا ہے بنگلہ دیش کے سب سے بڑے اخبار ’پروتھوم الو‘‘ کے مطابق جماعت اسلامی کے ان رہنماؤں کو سبوتاژ کے الزام میں گرفتار کیا گیا ہے۔اے ایف پی کے مطابق یہ گرفتاریاں ایک ایسے موقع پر عمل میں آئی ہیں جب بنگلہ دیشی حکومت نے اپوزیشن جماعتوں کے خلاف کریک ڈاؤن شروع کر رکھا ہے۔ یہ کریک ڈاؤن میانمار سے جانیں بچا کر بنگلہ دیش پناہ کے لیے آنے والے روہنگیا مسلمانوں کے ساتھ بنگلہ دیشی حکومت کے سلوک کے سبب وہاں ہونے والے مظاہروں کے بعد شروع کیا گیا۔اعلیٰ بنگلہ دیشی عدالت نے سن 2013    جماعت کے چارٹر کو  ملک کے سیکولر دستور کے منافی  قرار دے کر  جماعت اسلامی کے پارلیمانی انتخابات میں حصہ لینے پر پابندی عائد کر دی تھی ۔

The short URL of the present article is: http://harpal.in/Ym0g2

Check Also

ممبئی میں شمالی ہندوستانی پھیری کرنے والوں پرٹوٹی آفت۔مہاراشٹرانونرمان سینا کی زیادتی۔ہاکرس کے سامان اٹھا کر پھینکنے اوردوڑا دوڑا کر پیٹنے کی واردات

Share this on WhatsAppممبئی(ہرپل نیوز،ایجنسی)21 اکتوبر۔حال میں ممبئی کے الفنسٹن روڈ لوکل اسٹیشن کے فٹ …

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا. ضرورت کے کھیتوں ک* نشان لگا دیا گیا ہے