Breaking News
Home / اہم ترین / بی جے پی ایم پی اننت کمار ہیگڑےنےاپنی پوزیشن کی بھی نہیں کی پروا۔ ہاسپٹل اسٹاف اور ڈاکٹروں پر کی دست درازی ۔واقعہ کے بعد ڈاکٹروں کا احتجاج ۔ غنڈہ گردی سی سی ٹی وی میں قید

بی جے پی ایم پی اننت کمار ہیگڑےنےاپنی پوزیشن کی بھی نہیں کی پروا۔ ہاسپٹل اسٹاف اور ڈاکٹروں پر کی دست درازی ۔واقعہ کے بعد ڈاکٹروں کا احتجاج ۔ غنڈہ گردی سی سی ٹی وی میں قید

بھٹکل(ہرپل نیوز) 3/جنوری :  عوام کی نمائندگی کرنے والے اور ان کے لیے تمام سہولیات مہیا کرانے کا دعویٰ کرنے والوں کا جب عام آدمی جیسے  حالات سے  سامنا ہوتا ہے تو ان کو حقیقت معلوم ہوتی ہے۔ کچھ ایسا ہی بی جے پی کے ممبر پارلیمنٹ اننت کمار ہیگڑے  کے ساتھ ہوا جب وہ اپنی والدہ کو علاج کے لیے ساتھ لیکر ہاسپیٹل پہنچے۔   بی جے پی ایم پی اننت کمار ہیگڑے اپنی والدہ کےعلاج کے لیے ہاسپٹل پہنچےاور  وہاں صحیح دیکھ بھال نہ کرنےکا الزام لگا کر انہوں نے  ہاسپٹل اسٹاف  کے ساتھ بد سلوکی کی ۔ یہ واقعہ کل دیر رات  سر سی کے ایس ایس ٹی ہاسپٹل میں پیش آیا ۔ بی جے پی  ایم پی کے حملے میں ڈاکٹروں کو  چوٹیں  آئی ہیں ۔ماردھاڑ کا پورا معاملہ سی سی ٹی وی کیمرے میں قید ہوا ہے۔ پرائیویٹ اسپتال میں رکن پارلیمنٹ  اننت کمار ہیگڈےکی غنڈہ گردی کی سی سی ٹی وی فوٹیج منظر عام پر آجانے کے بعد ان کی حقیقت طشت از بام ہوگئی ہے ۔بتایا  گیا ہے کہ ڈاکٹر مدھوکیشور ، ڈاکٹر بال چندرا بھٹ اور ایک اسٹاف راہول پر انہوں نے حملہ کیا اور تینوں کی پیٹائی کی۔ ابتدائی خبرو ں ککے مطابق پولس  نے فریقین کو مفاہمت کی صلاح دے کر معاملہ کو رفع دفع کرنے کو کہا ۔  مار پیٹ اور غنڈہ گردی کی یہ ویڈیو کلپ سوشیل میڈیا پر عام ہوجانے کے بعدہ سرسی میں انڈین میڈیکل اسوسی ایشن نے احتجاج کرتے ہوئے  واقعہ کی سخت مذمت کی ہےاور اسسٹنٹ کمشنر کو میمورنڈم پیش کیا ہے۔ دوسری جانب منگلور میں بھی ڈاکٹرس نے احتجاج کا من بنالیا ہے ۔ واضح  رہے کہ اس سے پہلے  بھی لوگ اپم پی کے رویے پر تنقید کرتے رہے ہیں لیکن یہ پہلا موقع ہے کہ جب باضابطہ طور پر وہ ایسی حرکتیں کرتے ہوئے کیمرے میں قید ہوئے ہیں ۔ قانون ہاتھ میں لینے والے عام آدمی کی طرح  اس ایم پی کے ساتھ بھی یہی معاملہ ہوگا یا  شاہی مجرموں کی طرح اس کے جرائم پر بھی پردہ ڈالا جائے گا   یہ دیکھنا اب اہم ہوگا

The short URL of the present article is: http://harpal.in/BznkT

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا. ضرورت کے کھیتوں ک* نشان لگا دیا گیا ہے