Breaking News
Home / اہم ترین / حیدر آباد میں پی ایم کے ہاتھوں میٹرو کا افتتاح۔ حیدر آباد واسیوں کا دیرینہ خواب شرمندہ تعبیر 

حیدر آباد میں پی ایم کے ہاتھوں میٹرو کا افتتاح۔ حیدر آباد واسیوں کا دیرینہ خواب شرمندہ تعبیر 

حیدرآباد۔(ہرپل نیوز، ایجنسی)29نومبر۔ وزیر اعظم نریندر مودی نےحیدرآباد میں میٹرو ریل کا افتتاح کیا۔ تلنگانہ کے وزیر اعلی کے۔ چندرشیکھر راؤ نے ہوائی اڈے پر مسٹر مودی کا خیر مقدم کیا۔ وزیر اعظم نریندر مودی نے کہا کہ آج کل پوری دنیا کی نظر حیدرآباد پر ہے۔ آج حیدرآباد میں ایک بہت ہی معزز بین الاقوامی اجلاس ہے۔ اس میں دنیا بھر سے صنعت کار شرکت کریں گے۔ وزیراعظم نے کہا کہ جنوبی بھارت کے اس حصے میں بی جے پی کو حکومت میں رہنے کا زیادہ موقع نہیں ملا ہے۔وزیراعلی نے کہا کہ اس کے باوجود ہمارے کارکن زمینی سطح پر کام کرتے ہیں اور لوگوں کے ساتھ کھڑے ہیں۔ ہمیں اپنے کارکنوں کے اس خاندان سے فخر ہے۔مسٹر مودی نے کہا کہ ہم وفاقی ڈھانچے میں یقین رکھتے ہیں۔ جناب مودی نے کہا کہ کوئی سوال نہیں ہے کہ جہاں ہم اقتدار میں نہیں ہیںان ریاستوں کے ساتھ تفریق برتی جایے۔ ہم پورے ملک کی ترقی کے لئے پرعزم ہیں۔کل صبح وزیر اعظم نریندر مودی نے لمبے عرصے کے انتظار کے بعد حیدرآباد میٹرو ریل کا افتتاح کیا ناگول اور میاپور کے درمیان 30 کلومیٹر طویل میٹرو ریل سروس کا آغاز مسٹر مودی نے میا پور اسٹیشن پر کیا۔ اس راستے میں 24 سٹیشنیں ہوں گے۔ حیدرآباد میں میٹرو کی تجارتی کارروائی  آج سے شروع ہوگی۔تلنگانہ انفارمیشن ٹیکنالوجی وزیر کیٹی رام راؤ نے کہا کہ ابتدائی دور میں میٹروصبح 6 سےرات 10 بجے تک چلے گی۔ مسافروں کی تعداد اور طلب کو دیکھ کر وقت 5:30 بجے سے 11 بجے تک کیا جائے گا۔

حیدرآباد میں میٹرو ریل،خصوصیات و مراعات : میٹرو ریل کا 30 کیلو میٹر طویل پراجیکٹ میاں پور سے ناگول کے درمیان ہے جس میں 24 اسٹیشن ہونگے ۔اس کی تجارتی سرگرمیاں ( عوامی حمل و نقل ) دوسرے دن 29 نومبر سے شروع ہونگی ۔یہ ٹرینیں صبح 6 بجے سے رات 10 بجے تک چلائی جائیں گی اور پھر بعد میں اس کے اوقات صبح 5.30 سے رات 11 بجے تک کردئے جائیں گے جو ٹریفک اور عوامی طلب کو دیکھتے ہوئے کیا جائیگا ۔

اس پراجیکٹ کیلئے ایل اینڈ ٹی میٹرو ریل ( حیدرآباد ) لمیٹیڈ نے سب سے کم کرایہ 10 روپئے ( دو کیلو میٹر تک ) اور سب سے زیادہ کرایہ 60 روپئے ( 26 کیلومیٹر سے زیادہ کیلئے ) طئے کیا ہے ۔ ابتداء میں ہر ٹرین میں تین کوچس ہونگے ۔سفر کو آسان بنانے کے لئے اسمارٹ کارڈس جس کی قیمت کم سے کم ایک سوروپئے اور زیادہ سے زیادہ 3000روپئے مقرر کی گئی ہے اب سے یہ اسمارٹ کارڈس ناگول‘ تارناکہ ‘ پرکاش نگر‘ ایس آر نگر اسٹیشن پر صبح10تا شام5بجے دستیاب ہیں۔عوام کے رد عمل کو دیکھتے ہوئے کوچس کی تعداد میں اضافہ بھی کیا جاسکتا ہے ۔ یہ تعداد زیادہ سے زیادہ 6 کی جاسکتی ہے ۔ کے ٹی آر نے کہا کہ میٹرو ریل کے آغاز کے ساتھ ہی حیدرآباد کی ترقی اور معاشی سرگرمیوں میں اضافہ ہونے کے ساتھ عوام کو نیا ٹرانسپورٹ نظام دستیاب ہوگا ۔

The short URL of the present article is: http://harpal.in/iDaT1

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا. ضرورت کے کھیتوں ک* نشان لگا دیا گیا ہے