Breaking News
Home / اہم ترین / راجیہ سبھا میں نوٹ بندی پربولے منموہن سنگھ۔ سابق وزیر اعظم نے مودی کے فیصلے کو فاش غلطی سے کیا تعبیر،

راجیہ سبھا میں نوٹ بندی پربولے منموہن سنگھ۔ سابق وزیر اعظم نے مودی کے فیصلے کو فاش غلطی سے کیا تعبیر،

نئی دہلی(ہرپل نیوز،ایجنسی)24نومبر: گزشتہ پانچ دنوں سے نوٹ کی منسوخی پر بحث کے سلسلے میں راجیہ سبھا میں جاری تعطل آج ختم ہو گیا اور حکمراں فریق اور اپوزیشن کی رضامندی کے بعد اس معاملے پر بحث دوبارہ شروع ہو گئی۔ اس معاملے پر حکمراں فریق اور اپوزیشن کے ارکان کے ہنگامے کی وجہ سے صبح ایوان کا اجلاس 12 بجے تک کے لیے ملتوی کر دیا گیا تھا۔ وزیر اعظم نریندر مودی کی موجودگی میں نوٹ بندی پر بحث شروع ہوئی، سابق وزیر اعظم منموہن سنگھ نے نوٹ بندي پر بحث کا آغاز کیا۔ گزشتہ پانچ دنوں سے حزب اختلاف کی جماعت کے اراکین وزیر اعظم کی موجودگی میں نوٹ کی منسوخی کی وجہ سے لوگوں کو ہو رہی دشواریوں پر راجیہ سبھا میں بحث کرنے کا مطالبہ کر رہے تھے۔

سماج وادی پارٹی کے رام گوپال یادو نے کہا کہ نوٹوں کی منسوخی کے معاملے پر ان کی پارٹی نے ضابطہ 267 کے تحت نوٹس دیا  ہے جس کی وجہ سے ایوان میں دوسرے معاملوں پر بحث نہیں کی جاسکتی ہے۔ مسٹر کورین نے کہا کہ سماج وادی پارٹی کے رکن نریش اگروال نے نوٹوں کی منسوخی کی وجہ سے لوگوں کو ہونے والی مشکلات کے سلسلے میں نوٹس دیا ہے، جسے تکنیکی بنیاد پر منظور کرلیا گیا ہے۔ ترنمول کانگریس کے رکن ڈیر او ۔ برائن نے کہا’’ نوٹوں کی منسوخی کے سلسلے میں سابق وزیر اعظم بولنا چاہتے ہیں اور ہم انہیں سننا چاہتے ہیں ۔ اس لئے انہیں بولنے دیا جائے۔‘‘ وزیر مملکت برائے پارلیمانی امور مختار عباس نقوی نے کہا کہ مسٹر سنگھ  کا وہ احترام کرتے ہیں ۔ ان کی تقریر سے اس معاملے پر بحث کا آغاز ہونا چاہئے۔

سابق وزیر اعظم منموہن سنگھ نے کہا کہ پی ایم کہہ رہے ہیں کہ نوٹ بندی کا فیصلہ آگے لے جانے والا فیصلہ ہے اور اس سے دہشت گردی بھی رکے گی۔ میں اس کی مخالفت نہیں کر رہا۔ لیکن جو لوگ متاثر ہو رہے ہیں ان کی بات سنی جانی چاہئے۔ پی ایم نے 50 دن انتظار کرنے کو کہا ہے، یہ چھوٹا وقت ہو سکتا ہے لیکن ملک کے غریبوں کے لئے چھوٹے وقت نہیں ہیں۔ ہمیں نہیں پتہ کہ نوٹ بندی کا آخری نتیجہ کیا ہوگا۔ اس کے خطرناک نتائج ہو سکتے ہیں۔ بینکنگ سسٹم پر سے لوگوں کا اعتماد کمزور ہوا ہے۔

The short URL of the present article is: http://harpal.in/1OtpO

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا. ضرورت کے کھیتوں ک* نشان لگا دیا گیا ہے