Breaking News
Home / تازہ ترین / سابق استاذ جامعہ اسلامیہ جناب حافظ شمیم صاحب کا انتقال پُرملال، جامعہ کے ذمہ داران و اساتذہ نے کیا غم و حزن کا اظہار

سابق استاذ جامعہ اسلامیہ جناب حافظ شمیم صاحب کا انتقال پُرملال، جامعہ کے ذمہ داران و اساتذہ نے کیا غم و حزن کا اظہار

بھٹکل(ہرپل نیوز)3 ڈسمبر. کچھ روز قبل شعبہ حفظ جامعہ اسلامیہ بهٹکل کے سابق استاذ جناب حافظ شمیم صاحب کی علالت کی اطلاع موصول ہوئی تهی جس پر جامعہ آباد کی مسجد میں طلبہ سے ان کی صحت یابی کے لئے دعا کی درخواست کی گئی تھی، کچھ ہی دن گزرے تھے کہ 30 صفر المظفر 1438ھ بدھ کو آپ کی وفات کی خبر ملی، اس خبر نے جامعہ کے اساتذہ واحباب بھٹکل کو حزن و ملال کی کیفیت میں مبتلا کردیا ۔ آج ۳؍ ربیع الاول 1438ھ مطابق ۳؍ ڈسمبر 2016ء بروز سنیچر بعد نماز ظہر مہتمم جامعہ اسلامیہ مولانا مقبول احمد صاحب کوبٹے ندوی نے جامعہ اسلامیہ کی مسجد میں اساتذہ و طلبہ کی موجودگی میں حافظ جیؒ کے تعلق سے تعزیتی کلمات پیش کئے۔

علاقات عامہ جامعہ اسلامیہ بهٹکل کی جانب سے پریس ریلیز کے زریعہ ملی جانکاری کے مطابق مہتمم جامعہ نے بتایا کہ حافظ شمیم صاحب ؒ کا تعلق بہار سے تھا، آپ نے جامعہ اسلامیہ کے شعبہ حفظ میں تقریباً ۱۲ سال قرآن کی خدمت کی، اور بہت سارے طلبہ آپ کی زیر نگرانی حافظ قرآن ہوئے۔مرحوم شمیم حافظ جی کے نام سے موسوم تھے، مرحوم نے کچھ سال بھٹکل کی دو مساجد مسجد نور اور مسجد عثمانیہ میں امامت کے فرائض بھی انجام دئے ہیں اور بہت سے احباب آپ سے مستفید ہوچکے ہیں، پھر آپ مسقط منتقل ہوئے جہاں پر آپ نے قرآن مجید کی بڑی خدمت انجام دی۔ آپ کا جامعہ اور احباب جامعہ سے قوی تعلق تھا، اساتذۂ جامعہ سے آپ کے مراسم تھے، جامعہ کے بڑے فکرمندتھے۔ آپ کے ممتاز شاگردوں میں نابینا حافظ اشفاق صاحب شامل ہیں ۔
اللہ تعالی آپ کی مغفرت فرمائے، آپ کے قرآن کی خدمت پر اپنی شایان شان بدلہ عطا فرمائے اور جنت الفردوس میں اعلی مقام عطا فرمائے، آپ کے پسماندگان کو صبر جمیل عطا فرمائے.

The short URL of the present article is: http://harpal.in/2FSM5

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا. ضرورت کے کھیتوں ک* نشان لگا دیا گیا ہے