Breaking News
Home / اہم ترین / شدت پسندوں کی شدید مخالفت کے باوجود منگلور پہنچے کیرلا کے وزیر اعلی ۔ریالی سمیت کئی پروگراموں میں کی شرکت۔ سخت حفاظتی انتظامات رہے

شدت پسندوں کی شدید مخالفت کے باوجود منگلور پہنچے کیرلا کے وزیر اعلی ۔ریالی سمیت کئی پروگراموں میں کی شرکت۔ سخت حفاظتی انتظامات رہے

منگلور( ہرپل نیوز ) 25فروری:منگلور میں کیرالہ کے وزیراعلیٰ پینرائی وجئین کی آمد کے خلاف ہندو شدت پسند تنظیموں کے احتجاج اور بندکے اعلان کا اچھا خاصہ اثر دیکھنےکو ملا ۔شہر کے کچھ مضافاتی علاقوں میں بسوں پر پتھراؤ اور راستوں پر رکاوٹیں کرکے لوگوں میں ڈر اور خوف پیدا کرنے کی کوشش کی گئی، لیکن ان سب کے باوجود کیرالہ کے وزیراعلیٰ پینرائی وجئین ٹرین پر سے مینگلور پہنچے ۔اُدھر دوسری جانب شرپسندوں کی طرف سے بسوں پر پتھراؤ کا سلسلہ جاری رہا، ذرائع کے مطابق مینگلور اسٹیٹ بینک سے عطاور۔منگلادیوی کے لئے جانے والے ایک بس سمیت مزید کچھ بسوں پر بھی پتھراؤ کرکے بسوں کو نقصان پہنچانے کی بھی اطلاعات موصول ہوئی ہیں۔ منگلور میں ویسے حالات مکمل قابو میں رہے اور حالات پر گہری نظر رکھنے پولس کے اعلیٰ حکام شہر میں ہی موجود ہیں۔حالات کی نزاکت کے پیش نظر شہر کے اہم ناکوں پر پولس کا سخت بندوبست کیا گیا تھا ۔

وزیر اعلی کا خطاب : منگلورو میں کیرلا کے وزیر اعلی پنرائی وجئین نے فرقہ وارانہ ہم آہنگی ریلی سےخطاب کرتے ہوئے کہا کہ وہ آر ایس ایس کی دھمکیوں کے سامنے جھکنے والے نہیں ہیں ۔ وزیر اعلی پنرائی وجئین نے منگلورو میں سی پی آئی ایم کے تحت نکالی گئی ریلی کے بعد ہوئے اجلاس سے خطاب کے دوران یہ بات کہی ۔ پنرائی وجئین نے اپنے خطاب میں آر ایس ایس پر نشانہ سادھتے ہوئے کہا کہ مہاتما گاندھی کے قتل کے دن آر ایس ایس نے مٹھائیاں تقسیم کی تھی۔پنرائی وجئین نے ملک کی موجودہ حکومت کو بھی اپنی تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ ملک میں ہٹلر، اور مسولینی کی پالیسی کو نافذ کیا جا رہا ہے ۔ واضح رہے کہ کیرلا کے وزیر اعلی پنرائی وجئین کی آمد کے خلاف بی جے پی اور آر ایس ایس نے منگلور و بند کی کال دی تھی ۔

وارتا بھارتی کے نئے دفتر کا افتتاح : منگلور میں آج وارتا بھارتی کے نئے دفتر کا افتتاح کیرلا کے وزیر اعلی کے اہتھوں عمل میں آیا ۔ اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے کیرلا کے وزیر اعلی نے کہا کہ غریبوں کی آواز اٹھانے کو لیکر وارتا بھارتی کا کردار دیگر میڈیا سے مختلف ہے ۔ ۔ انہوں نے مزید کہا کہ فرقہ پرست طاقتوں کے لئے وارتا بھارتی ایک بڑا چیلنج بنا ہوا ہے ۔ ۔ نئے آفس مادھیما کیندرا کے اففتاح کے بعد خطاب کرتے ہوئے وزیر اعلی پینرائی وجئین نے واضھ کیا کہ ملک کا میڈیا سرمایہ داروں کے قبضے میں ہے اور ایسے ماحول میں وارتا بھارتی غریبوں اوردبے کچلے طبقے کی آواز بنا ہوا ہے ۔ افتتاحی تقریب میں یوٹی قادر ، محی الدینباوا اور راماناتھ رائے وغیرہ موجود تھے ۔

The short URL of the present article is: http://harpal.in/4JI1E

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا. ضرورت کے کھیتوں ک* نشان لگا دیا گیا ہے