Breaking News
Home / اہم ترین / لاپتہ ماہی گیروں کو ڈھونڈنےکے مطالبے کے ساتھ بھٹکل میں ہزاروں ماہی گیروں کا احتجاج۔ اسسٹنٹ کمشنر کو یادداشت

لاپتہ ماہی گیروں کو ڈھونڈنےکے مطالبے کے ساتھ بھٹکل میں ہزاروں ماہی گیروں کا احتجاج۔ اسسٹنٹ کمشنر کو یادداشت

بھٹکل (ہرپل نیوز)4جنوری: تیرہ ڈسمبر کو سات ماہی گیر ایک بوٹ پر سوار ہوکر اُڈپی کے ملپے سے مچھلیوں کا شکار کرنے سمندر میں اُترے تھے، دو روز بعد یعنی 15 دسمبر کو ماہی گیروں سے رابطہ منقطع ہوگیا جس کے بعد سے اب تک نہ متعلقہ بوٹ کا پتہ چل پایا ہے اور نہ ہی کسی ماہی گیر سے رابطہ ہوپایا ہے۔ ان ماہی گیروں کو تلاش کرنے میں حکومت کی ناکامی کا الزام لگاتے ہوئے بھٹکل میں ماہی گیروں نے زبر دست احتجاج کیا ۔پندرہ۔بیس دن سے لاپتہ ماہی گیروں کا پتہ لگانے میں ناکام ہونے کا الزام عائد کرتے ہوئے آج جمعرات کو بھٹکل میں ہزاروں ماہی گیروں نے احتجاجی مظاہرہ کر کے سرکار کے خلاف جم کر نعرے بازی کی ۔ احتجاجیوں نے بھٹکل اسسٹنٹ کمشنر کو میمورنڈم پیش کرتے ہوئےلاپتہ ماہی گیروں کا فوری سراغ لگانے کا مطالبہ کیا گیا ۔ماہی گیروں نے ریاستی اورمرکزی حکومت پر بھی ماہی گیروں کا سراغ لگانے میں ناکام ہونے کا الزام لگایا۔ ان کا کہنا تھا کہ بوٹ پر GPS سسٹم ہونے کے باوجود ہماری سیکوریٹی ایجنسیاں اگر ایک بوٹ کو تلاش کرنے میں ناکام ہوتی ہے تو یہ صرف ماہی گیروں کے تحفظ کا نہیں بلکہ ملک کی سیکوریٹی پر بھی سوالیہ نشان ہے۔اس بیچ ماہی گیروں نے اے سی کے ذریعے سرکار کو دھمکی دی ہے کہ چھ جنوری تک اگر لاپتہ ماہی گیروں کا پتہ نہیں لگایا تو پڑوسی ضلع اُڈپی کے ملپے میں پورے ساحلی کرناٹک کے دو لاکھ ماہی گیر جمع ہوکر زبردست احتجاج کریں گے۔
خیال رہے کہ لاپتہ ہونے والے سات ماہی گیروں میں دو کا تعلق بھٹکل، دو کا تعلق کمٹہ، ایک کا تعلق ہوناور اور دو کا تعلق اُڈپی کے ملپے سے ہے۔ آج ماہی گیروں نےاحتجاجا اپنا تمام کام کاج بند رکھا اورمچھلیوں کا بیوپار نہ کرکے سرکار کے خلاف اپنی سخت ناراضگی کا اظہار کیا۔

The short URL of the present article is: http://harpal.in/paRjH

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا. ضرورت کے کھیتوں ک* نشان لگا دیا گیا ہے