Breaking News
Home / تازہ ترین / مرلی اور کوہلی کی سنچریوں سے ہندوستان کی پوزیشن مضبوط

مرلی اور کوہلی کی سنچریوں سے ہندوستان کی پوزیشن مضبوط

پہلی اننگز میں51رن کی برتری، مہمان ٹیم کے لئے معین علی اور عادل رشید دو دو وکٹ لینے میں کامیاب

ممبئی( ایجنسی)۔11؍دسمبر: ہندوستان نے انگلینڈ کے خلاف چوتھے ٹسٹ میچ کی پہلی اننگز میں برتری حاصل کرلی ہے۔ اس میں مرلی وجئے اور ٹسٹ کپتان ویراٹ کوہلی کا رول اہم رہا۔ دونوں نے اپنی اپنی سنچریوں سے ٹیم کے اسکور کو استحکام بخشا۔ اس طرح میزبان ٹیم نے میچ کے تیسرے دن کھیل ختم ہونے تک 7وکٹ کے نقصان پر451رن بنالیے یعنی51رن کی برتری پالی ہے۔ کوہلی نے ناٹ آؤٹ 147رن بنائے ہیں اوریہ ان کی 15ویں ٹسٹ سنچری ہے۔اس سے قبل مرلی وجئے نے بھی 136رن والی اپنی سنچری اسکور کی۔وجئے نے 282گیندوں کی اپنی اننگز میں 10چوکے اور3 چھکے لگائے وہیں کوہلی نے 241گیندوں پر ناٹ آؤٹ 147 رن میں 17چوکے لگائے ۔ وجئے نے سیریز کی اپنی دوسری اور کل آٹھویں سنچری بنائی جبکہ کوہلی کی بھی سیریز کی یہ دوسری سنچری ہے۔وجئے اورکوہلی نے تیسرے وکٹ کے لئے 35.2 اوور میں 116 رن کی ساجھے داری کرکے ہندوستان کو مضبوط پوزیشن میں پہنچا یا۔ وجئے نے اس سے پہلے چتیشور پجارا (47) کے ساتھ دوسرے وکٹ کے لئے 47 رن جوڑے ۔ کوہلی نے آل راؤنڈر رویندر جڈیجہ (25)کے ساتھ ساتویں وکٹ کے لئے 57 رن اور جینت یادو (ناٹ آوٹ 30) کے ساتھ آٹھویں وکٹ کے لئے 87 رن کی ناٹ آوٹ شراکت کرکے ہندوستان کو برتری دلا ئی ۔کوہلی نے اپنی اننگز کے دوران ٹسٹ کرکٹ میں 4000رن مکمل کر لیے اور اس سال 1000 رن پورے کرنے کی کامیابی بھی اپنے نام کر لی۔ان کے 2016ء میں 1,112رن ہو چکے ہیں۔جینت نے 86گیندوں کی اپنی ذمہ دارانہ اننگز میں3چوکے لگائے ۔ ہندوستان اب چوتھے دن اپنی برتری کو اور مضبوط کرنے کی کوشش کرے گا۔364 رن کے اسکور پر رویندر جڈیجہ کے آؤٹ ہونے کے بعد کریز پر آئے جینت نے کوہلی کے ساتھ جم کر کھیلتے ہوئے ٹیم کو پہلے برابری پھر 51رن کی اہم برتری دلائی ۔مرلی اور ویراٹ کے علاوہ چتیشور پجارا (47) تیسرے بہترین اسکورر ہیں۔ تاہم وہ 3رن سے اپنی نصف سنچری سے چوک گئے۔ ہندوستان نے صبح ایک وکٹ پر 146 رن سے آگے کھیلنا شروع کیا۔وجئے 70 اور پجارا 45 رن پر ناٹ آؤٹ تھے ۔ پجارا اپنے اسکور میں کوئی اضافہ کئے بغیر جیک بال کی گیند پر بولڈ ہو گئے ۔ پجارا نے 104 گیندوں میں 6چوکے لگائے ۔ اس کے بعد میدان پر اترے کوہلی اور وجئے نے مورچہ سنبھالتے ہوئے لنچ تک اسکور دو وکٹ پر 247 پہنچایا۔ہندوستان کو تیسرا جھٹکا لنچ کے بعد لگا جب لیگ اسپنر عادل رشید نے وجئے کو اپنی ہی گیند پر کیچ آوٹ کیا۔وجئے کا وکٹ 262 کے اسکور پر گرا۔کر ن نائر 13 رن بنانے کے بعد آف اسپنر معین علی کی گیند پر ایل بی ڈبلیو ہو گئے ۔ نائر کو امپائر نے ناٹ آوٹ قرار دیا تھا لیکن انگلینڈ نے ڈی آر ایس مانگا اور تیسرے امپائر نے کئی ری پلے دیکھنے کے بعد امپائر کو اپنا فیصلہ تبدیل کرنے کے لئے مجبور کر دیا۔ نائر مایوس ہوکر پویلیئن لوٹ گئے ۔گزشتہ میچ میں اوپننگ میں اترے وکٹ کیپر پارتھیو پٹیل اس بار چھٹے نمبر پر آئے اور 15 رن بنانے کے بعد جو روٹ کا شکار بن گئے ۔پٹیل کا کیچ وکٹ کیپر جانی بیرسٹو نے لیا۔گزشتہ کافی عرصے سے شاندار فارم میں کھیل رہے روی چندرن اشون حیرت انگیز طور پر اس بار صفر پر آؤٹ ہو گئے ۔ اشون کو روٹ نے کیٹن جیننگز کے ہاتھوں کیچ کرایا۔ہندوستان کا چھٹا وکٹ 307رن پر گرا۔اس وقت ایسا لگ رہا تھا کہ ہندوستان کے لئے برتری حاصل کرنا مشکل کام ہوگا لیکن کوہلی نے جڈیجہ اور جینت کے ساتھ اہم شراکت کرتے ہوئے ہندوستان کو 51رن کی برتری دلا دی۔انگلینڈ کی جانب سے معین علی نے 139رن، عادل رشید نے 152رن اور جو روٹ نے 18 رن پر دو دو وکٹ لئے جبکہ جیک بال کو 29 رن پر ایک وکٹ ملا۔

The short URL of the present article is: http://harpal.in/dJvjE

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا. ضرورت کے کھیتوں ک* نشان لگا دیا گیا ہے