Breaking News
Home / اہم ترین / مصباح اور حفیظ کا اسپاٹ فکسنگ میں ملوث کھلاڑیوں پر تاحیات پابندی کا مطالبہ

مصباح اور حفیظ کا اسپاٹ فکسنگ میں ملوث کھلاڑیوں پر تاحیات پابندی کا مطالبہ

لاہور(ایجنسی)19 مارچ: پاکستان کے ٹیسٹ کپتان مصباح الحق اور کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان محمد حفیظ نے حال ہی میں ختم ہونے والی پاکستان سپر لیگ(پی ایس ایل) میں اسپاٹ فکسنگ میں ملوث کھلاڑیوں پر تاحیات پابندی لگانے کا مطالبہ کیا ہے۔ میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ٹیم کے کپتان مصباح نے کہا کہ اگر کھلاڑی اسپاٹ فکسنگ کے مرتکب قرار پائیں تو ان پر تاحیات پابندی عائد کی جائے۔ پاکستان کی ٹیسٹ ٹیم کے قائد نے ناصر جمشید کے خلاف بھی سخت ایکشن لینے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ جو کھلاڑی اسپاٹ فکسنگ میں ملوث قرار پائیں ان پر عمر بھر کیلئے پابندی عائد کی جائے۔ ہم اس واقعے سے بہت مایوس ہیں۔

انہوں نے کہا کہ اسپاٹ فکسنگ اسکینڈل نے پاکستان کرکٹ کے امیج کو خراب کیا، ایسا محسوس ہوتا ہے کہ ہم نے جو سات سال تک پاکستان کرکٹ کی بہتری کیلئے کوششیں کی وہ سب ضائع ہو گئیں۔اس طرح کے واقعات سامنے آنے کے بعد ایسا لگتا ہے کہ پوری محنت پر پانی پھر گیا ہے۔ دورہ ویسٹ انڈیز کے بارے میں سوال پر مصباح نے کہا کہ انہیں یہ سیریز مشکل لگ رہی ہے کیونکہ ویسٹ انڈین کھلاڑی ہوم کنڈیشنز کا فائدہ اٹھانے کا گر جانتے ہیں۔کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان محمد حفیظ نے بھی میچ فکسنگ کو جرم قرار دیتے ہوئے ملوث کھلاڑیوں کو ایسی سزائیں دینے کا مطالبہ کردیا ہے جو آنے والوں کے لیے مثال بن جائیں۔ لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے محمد حفیظ نے کہا کہ اگر کسی کھلاڑی نے پاکستان کی عزت کو نقصان پہنچایا ہے تو اسے ہرگز معاف نہیں کرنا چاہیئے۔محمد حفیظ نے کہا کہ میچ فکسنگ کرنے والوں کو ایسی سزائیں دی جائیں کہ مستقبل میں لوگ ڈریں اور ان سزاؤں کی مثالیں دی جاتی رہیں، جب کہ انھیں کھیلنے کا دوبارہ موقع بھی نہیں دینا چاہیے۔انھوں نے کہا کہ ملک کی نمائندگی کرنے والوں کو احساس ہونا چاہیے کہ فکسنگ ایک غلطی نہیں بلکہ ایک جرم ہے، جس سے ملک کا نام خراب ہوتا ہے۔

The short URL of the present article is: http://harpal.in/qYpOf

Check Also

جے این یو کے گمشدہ طالب علم نجیب کی والدہ فاطمہ نفس سمیت 35 افراد حراست میں،تاہم بعد میں رہا

Share this on WhatsApp نئی دہلی(ہرپل نیوز،ایجنسی)17۔اکتوبر۔ گزشتہ ایک سال سے لاپتہ جواہر لال نہرو …

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا. ضرورت کے کھیتوں ک* نشان لگا دیا گیا ہے