Breaking News
Home / اہم ترین / چنتا منی میں مدرسے کے طالب علم کا بہیمانہ قتل. کیا خزانے کی تلاش میں بچے کی بلی چڑھائی گئی؟ تحقیقات جاری

چنتا منی میں مدرسے کے طالب علم کا بہیمانہ قتل. کیا خزانے کی تلاش میں بچے کی بلی چڑھائی گئی؟ تحقیقات جاری

(چنتامنی،ہرپل نیوز، ایجنسی)24اگست : چنتامنی تعلق بنگلور ہائی وے روڈ پر واقع چنسندرہ گاوں کے قریب  موجود دارالعلوم محمودیہ مدرسہ میں زیر تعلیم طالب علم عبدالنواز ابن نوشاد (10)ساکن شہنشاہ نگر کولار کا کسی نے بے رحمی سے گلاکاٹ کر قتل کردیا۔ چکبالاپور ضلع سے آئی ہوئی خصوصی پولیس ٹیم نے مدرسہ کا جائزہ لیا وہاں کے لوگوں نے چنتامنی رورل پولیس سرکل انسپکٹر و سب انسپکٹر سے بتایا کہ مدرسہ کا مہتمم  ہمیشہ عملیات کیا کرتا تھا اُس بچے کو مہتمم اور آسام کا ایک شخص ان دونوں نے مل کر خرانہ نکالنے کے نام پر بہیمانہ  طریقے سے قتل کرنے کا سارے لوگوں کو گمان ظاہر ہورہا ہے اس کی فوری تحقیقات کرکہ مدرسہ کے مہتمم اور بچے کو قتل کرنے والوں کو گرفتار کرکہ قانونی کارروائی کرنے کے ساتھ ساتھ کڑی سزا بھی دینی چاہئے۔ڈی وائی ایس پی کرشنامورتی نے آج آخباری نمائندوں سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ دس سالہ نواز کو بہیمانہ طریقے سے قتل کرنے والوں کو گرفتار کرنے کے لئے ایک پولیس ٹیم کو آسام بھیجا گیا ہے لوگوں میں ہہ شک ہے کہ مدرسہ کے مہتمم مولانا عثمان اللہ شاہ نظامی نے ہی بچے کو خرانہ کے نام پر بلی چڑھایا ہوگا کیونکہ دس سالہ معصوم بچے کے گلا کو بے رحمی سے کاٹا گیا ہے پولیس اُس کی تحقیقات کررہی ہے ۔ہمیں خبر ہوئی ہے کہ مدرسہ کوچنسندرہ گاوں سے کچھ تعلقات نہیں ہے صرف گنے چنے بچوں کو رکھ کر عثمان اللہ مدرسہ چلایا کرتا تھا انہوں نے بتایا عنقریب چنتامنی تعلقہ کے جتنے بھی مدرسہ ہیں ان میں موجود مدرسوں کی تحقیقات کی جائےگی انہوں نے اپیل کی کسی بھی مدرسہ میں استاد کو رکھنے سے قبل اُس کا پتہ اور شناختی کارڈ تصویر وغیرہ تفصیل حاصل کر کے مدرسہ میں مدرس کی حیثیت سے رکھا جائے ۔یہاں کے مقامی علمائے کرام نے بھی اخباری نمائندوں سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ اسلام کسی کو قتل کرنے کا حکم نہیں دیتا معصوم بچے کو بے رحمی سے قتل کرنا شیطانی حرکت ہے جو لوگ دس سالہ نواز کو بے رحمی سے قتل کئے ہیں ان کا پتہ لگاکر انہیں کڑی سے کڑی سزا دی جائے ۔

The short URL of the present article is: http://harpal.in/gMfa6

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا. ضرورت کے کھیتوں ک* نشان لگا دیا گیا ہے