Breaking News
Home / اہم ترین / گجرات الیکشن کی تاریخوں کےاعلان کے ساتھ ہی امیدواروں اورسیاسی پارٹیوں کی دھڑکنیں تیز۔ دومراحل میں ہونگےانتخابات۔انتخابی ضابطہ اخلاق بھی نافذ۔اس بارای وی ایم نہیں بلکہ وی وی پیٹ کاہوگا استعمال

گجرات الیکشن کی تاریخوں کےاعلان کے ساتھ ہی امیدواروں اورسیاسی پارٹیوں کی دھڑکنیں تیز۔ دومراحل میں ہونگےانتخابات۔انتخابی ضابطہ اخلاق بھی نافذ۔اس بارای وی ایم نہیں بلکہ وی وی پیٹ کاہوگا استعمال

نئی دہلی (ہرپل نیوز ،ایجنسی)25 اکتوبر۔ الیکشن کمیشن گجرات اسمبلی انتخابات کی تاریخوں کا اعلان کر رہا ہے۔ گجرات میں 182 نشستوں پر الیکشن ہونا ہے۔ یہاں، مجموعی طور پر 50 ہزار 128 پولنگ اسٹیشن ہوں گے۔ ریاست میں تقریبا 4 کروڑ تیس لاکھ ووٹر ہیں۔ انتخابی ضابطہ اخلاق ابھی سے نافذ کر دیا گیا ہے۔پہلے مرحلہ میں نو دسمبر کو ووٹنگ، دوسرے مرحلہ میں چودہ دسمبر کو ووٹ ڈالے جائیں گے۔ گجرات میں بھی ووٹوں کی گنتی اٹھارہ دسمبر کو ہو گی۔ یعنی ہماچل پردیش اور گجرات کے نتیجے ایک ہی دن آئیں گے۔چودہ تا اکیس نومبر پہلے مرحلہ کے لئے کاغذات نامزدگی داخل کئے جا سکیں گے۔ بائیس نومبر کو کاغذات نامزدگی کی جانچ اور چوبیس نومبر تک نام واپس لئے جا سکتے ہیں۔ پہلے مرحلہ میں انیس اضلاع اور نواسی سیٹوں پر ووٹ ڈالے جائیں گے۔دوسرے مرحلہ میں بیس تا ستائیس نومبر کاغذات نامزدگی داخل کئے جا سکیں گے۔ اٹھائیس نومبر کو کاغذات نامزدگی کی جانچ ہو گی۔ جبکہ تیس نومبر تک نام واپس لئے جا سکتے ہیں۔ دوسرے مرحلہ میں چودہ اضلاع اور ترانوے سیٹوں پر ووٹنگ ہو گی۔ کل ایک سو بیاسی سیٹوں پر دو مرحلوں میں ووٹ ڈالے جائیں گے۔

لائسنسی ہتھیار تھانوں میں جمع کرانے ہوں گے۔ چناوی گاڑیوں کے استعمال کی ادائیگی ای پیمنٹ سے ہو گی۔ شکایت کے لئے چوبیس گھنٹے کا کنٹرول روم ہو گا۔ تین طرح کے انتخابی مشاہدین کام کر یں گے۔ موبائل ایپ کے ذریعہ بھی شکایت درج کرا سکیں گے۔ سنیما گھروں، ایف ایم اور ٹی وی میں اشتہارات پر خاص نظر رہے گی۔بوتھ اوئیرنیس گروپس کو بھی پولنگ اسٹیشنوں پر تعینات کیا جائے گا۔ ہر ایک امیدوار کو الگ بینک کھاتہ کھولنا ہو گا۔ اسی کھاتے سے چناو خرچ ہوں گے۔ ہر امیدوار کے لئے خرچ کی حد اٹھائیس لاکھ روپئے ہے۔ حساس بوتھوں پر ویڈیو کیمروں سے نظر رکھی جائے گی۔ایک بوتھ میں وی وی پیٹ پرچیوں کی گنتی ہو گی۔ ایک سو دو پولنگ بوتھوں پر صرف خاتون اہلکار تعینات کی جائیں گی۔ مقامی زبان میں ووٹنگ گائیڈ کو دستیاب کرایا جائے گا۔سبھی پولنگ اسٹیشنوں پر وی وی پیٹ مشینوں کا استعمال ہو گا۔ وی وی پیٹ کے استعمال سے عام آدمی اپنا ووٹ دیکھ سکے گا۔ اسی وجہ سے اس مشین کا استعمال کیا جا رہا ہے۔

The short URL of the present article is: http://harpal.in/3euIr

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا. ضرورت کے کھیتوں ک* نشان لگا دیا گیا ہے