Breaking News
Home / اہم ترین / کرناٹک میں 93 لاکھ روپے کے نئے نوٹ ضبط، فرضی گاہک بن کر گئے تھے ای ڈی افسر

کرناٹک میں 93 لاکھ روپے کے نئے نوٹ ضبط، فرضی گاہک بن کر گئے تھے ای ڈی افسر

نئی دہلی( ہرپلنیوز، ایجسنی)13؍دسمبر۔ نوٹ بندی کے بعد ایک طرف ملک کا عام آدمی ایک ایک نوٹ کے لئے پریشان ہے تو وہیں کالے دھن کو سفید کرنے کا کھیل کھیلنے والے گڈیوں میں کھیل رہے ہیں۔ ای ڈی، محکمہ انکم ٹیکس اور پولیس ہر روز ایسے کالے دھن کو بے نقاب کر رہی ہے۔ ایسا ہی ایک نیا کیس کرناٹک سے سامنے آیا ہے، یہاں سے ای ڈی نے 93 لاکھ روپے ضبط کئے ہیں۔ای ڈی نے کالا دھن سفید کرنے کے معاملے میں کرناٹک میں 7 افراد کو گرفتار کر 93 لاکھ روپے ضبط کئے ہیں۔ خاص بات یہ ہے کہ ای ڈی افسر خود فرضی گاہک بن کر گئے تھے۔ انہوں نے نوٹ بدلوانے کے بہانے اس سے 93 لاکھ روپے کے نئے نوٹ ضبط کئے۔ گرفتار افراد کمیشن پر نوٹ تبدیل کرنے کا کام کرتے تھے۔وہیں، کرناٹک کے بیلگاوں میں پولیس نے 25 لاکھ روپے کی نقدی برآمد کی ہے۔ ضبط کی گئی نقدی میں کل 14 لاکھ 2 ہزار روپے کے نئے نوٹ ہیں۔ نقدی لے جا رہے تین ملزم حراست میں ہیں۔ نوی ممبئی سے ملحق كوپركھیر علاقے میں 23 لاکھ 70 ہزار کی نقدی برآمد ہوئی ہے۔ تمام 2 ہزار کے نئے نوٹ ہیں۔ پولیس نے پیسوں کے ساتھ 2 افراد کو گرفتار کیا ہے۔ملک کے دوسرے حصوں سے بھی نوٹوں کی برآمدگی کا سلسلہ جاری ہے۔ ہریانہ کے انبالہ اور پٹودی سے لاکھوں روپے برآمد کئے گئے ہیں۔ انبالہ میں ٹرین چیکنگ کے دوران دو نوجوانوں سے پولیس نے 4 لاکھ 49 ہزار روپے نقد برآمد کئے۔ پولیس نے اطلاع کی بنیاد پر چھتیس گڑھ ایکسپریس میں چیکنگ کی تو دونوں نوجوانوں سے چار لاکھ سے زیادہ کے پرانے نوٹ ملے۔ اس کے علاوہ پٹودی میں شملہ مرچ سے بھرے ایک ٹرک کی جب تحقیقات کی تو پولیس کو ٹرک ڈرائیور سے تین لاکھ 16 ہزار روپے کے پرانے نوٹ برآمد ہوئے۔ یہ سارے 1000 اور 500 کے پرانے نوٹ تھے۔

The short URL of the present article is: http://harpal.in/X7YdM

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا. ضرورت کے کھیتوں ک* نشان لگا دیا گیا ہے