Breaking News
Home / اہم ترین / بنگلور ٹیسٹ : تیسرے دن کھیل ختم ، پجارا اور رہانے کی شاندار بلے بازی ، ٹیم انڈیا کو 126رنز کی برتری حاصل

بنگلور ٹیسٹ : تیسرے دن کھیل ختم ، پجارا اور رہانے کی شاندار بلے بازی ، ٹیم انڈیا کو 126رنز کی برتری حاصل

بنگلور(ایجنسی)6مارچ: چتیشور پجارا (ناٹ آؤٹ 79) اور اجنکیا رہانے (ناٹ آؤٹ 40) کے درمیان پانچویں وکٹ کے لیے 93 رنز کی ناٹ آؤٹ ساجھےداری کی بدولت ہندستانی کرکٹ ٹیم نے آسٹریلیا پر جوابی حملہ کرتے ہوئے دوسرے ٹیسٹ کے تیسرے دن پیر کو چھ وکٹ باقی رہتے 126 رنز کی مضبوط برتری حاصل کر لی۔ ہندستانی ٹیم نے اپنی دوسری اننگز میں 72 اوورز میں چار وکٹ کے نقصان پر 213 رنز بنا لئے ہیں اور اس کے پاس اب 126 رنز کی اہم برتری حاصل ہے۔بلے باز پجارا اور رہانے فی الحال میدان پر ڈٹے ہوئے ہیں۔

اننگز میں اوپنر راہل نے 51 رنز کی اہم نصف سنچری اننگز کھیلی اور اچھی شروعات دلائی اور اس کے بعد پجارا اور رہانے نے پانچویں وکٹ کے لئے 33.5 اوور میں 93 رن کی ناٹ آؤٹ ساجھےداری کرکے دن کا کھیل ختم ہونے تک ہندوستان کو مضبوط برتری دلا دی۔ سیریز میں اب تک یہ کسی جوڑی کی سب سے زیادہ شراکت بھی ہے۔اس سے پہلے 82 رنز کی سب سے زیادہ شراکت میٹ رینشا اور ڈیوڈ وارنر نے کی تھی۔بلے باز ابھینو مکند 16 رن، وراٹ کوہلی 15 رنز اور رویندر جڈیجہ دو رن بنا کر سستے میں آؤٹ ہوئے۔

اس سے پہلے ہندستان کی دوسری اننگز میں آسٹریلوی گیند بازوں نے بلے بازوں پر دباؤ بنانے کا اچھی کوشش کی اور چائے کے وقفہ تک ہندوستان کو 122 رن پر ہی چار جھٹکے دے دیئے۔تیز گیند باز جوش هیزل وڈ نے 57 رن پر سب سے زیادہ تین وکٹ نکالے جبکہ سٹیو او كيفے کو 28 رن پر ایک وکٹ ملا۔لیکن اس کے بعد ہندستان نے نئی توانائی کے ساتھ کھیلتے ہوئے پھر دن کے اختتام تک اپنا کوئی اور وکٹ نہیں گرنے دیا اور 91 رن اور جوڑ اسکور 212 تک لے گئے۔

چائے کے وقفہ تک اپنے چار وکٹ گنوانے کے بعد بلے بازوں نے کہیں بہتر کھیل کا مظاہرہ کیا اور پجارا نے 173 گیندوں کی اننگز میں چھ چوکے لگا کر ناٹ آؤٹ 79 رنز بنائے۔پجارا نے 125 گیندوں میں اپنے 50 رن پورے کئے جو ان کی ٹیسٹ میں 14 ویں نصف سنچری بھی ہے۔وہیں رہانے نے دوسرے سرے پر ان کا اچھا ساتھ دیا اور 10 گیندوں کی اننگز میں تین چوکے لگا کر ناٹ آؤٹ 40 رنز بنائے۔

راہل نے میچ میں اپنی مسلسل دوسری نصف سنچری بناتے ہوئے 51 رنز بنائے۔تاہم چائے وقفہ ہونے تک ہیزل وڈ نے ہندستان کے تین وکٹ لے کراسے دباؤ میں ڈال دیا۔اس وقت تک ہندستان کے پاس محض 35 رنز کی ہی برتری تھی لیکن دن کے اختتام تک پجارا اور راہل برتری کو 100 کے پار لے گئے۔راہل نے ابھینو مکند کے ساتھ 39 رن جوڑے۔مکند لیکن 16 رنز بنا کر ہیزل وڈ کی گیند پر بولڈ ہوئے اور آسٹریليا كو اس کا پہلا وکٹ جلد مل گیا۔

اس کے بعد راہل اور پجارا نے دوسرے وکٹ کے لئے 45 رن جوڑے۔لیکن اس شراکت پر جلد بریک كيفے نے لگا دیا اور راہل کپتان اسٹیون اسمتھ کو کیچ دے بیٹھے۔راہل نے 85 گیندوں میں چار چوکے لگا کر 51 رنز بنائے جو ان کی ٹیسٹ میں چوتھی اور اس میچ میں دوسری نصف سنچری ہے۔کپتان وراٹ کوہلی اس بار پھر سستے میں آؤٹ ہوئے اور 25 گیندوں کی اننگز میں ایک چوکا لگا کر 15 رنز ہی بنا سکے۔وراٹ کو بھی ہیزل وڈ نے ایل بی ڈبلیو کر ہندستان کا تیسرا اہم وکٹ نکالا۔

وراٹ کو امپائر نے فورا ایل بی ڈبلیو دیا لیکن ہندستانی کپتان نے اس کا ریویو مانگا۔یہ کافی قریبی معاملہ تھا کہ گیند نے پہلے پیڈ کو نشانہ کیا ہے یا بلے کو۔میدانی امپائر نے وراٹ کو آؤٹ دیا تھا، پھر امپائر كیٹل بورو نے بھی کہا کہ فی الحال کوئی ٹھوس ثبوت نہیں ہے کہ گیند نے پہلے بلے بازی کو نشانہ بنایا ہے۔بالآخر کچھ دیر بحث کے بعد ہندستانی کپتان کو پویلین ہی جانا پڑا۔اس سے پہلے وراٹ پہلی اننگز میں بھی 12 رنز ہی بنا سکے تھے۔

آسٹریلیا کی پہلی اننگز میں چھ وکٹ نکالنے والے لیفٹ آرم اسپنر رویندر جڈیجہ بھی دو رنز ہی بنا کر ہیزل وڈ کا شکار بن گئے اور ہندستان نے چائے تک اپنے چار وکٹ گنوا دیے۔تاہم 126 رنز کی برتری کے ساتھ فی الحال ہندستان کے چھ وکٹ محفوظ ہیں اور وہ میچ میں اچھی حالت میں ہے۔ اس سے پہلے میچ کی صبح جڈیجہ نے 63 رن پر چھ وکٹ لے کر آسٹریلوی ٹیم کی پہلی اننگز کو صبح کے سیشن میں 122.4 اوور میں 276 رنز پر سمیٹنے میں مدد کی جس سے مہمان ٹیم 87 رنز کی ہی برتری حاصل کرسکی۔ایم چنا سوامی اسٹیڈیم پر مہمان ٹیم نے چھ وکٹ پر 237 رنز سے اپنی اننگز کو آگے بڑھایا تھا اور اس کے پاس کل کی 48 رنز کی برتری تھی۔تاہم ٹیم کے باقی چار بلے باز برتری میں محض 39 رنز کا ہی اضافہ کر سکے اور اس کے باقی وکٹ محض سات رن کے اندر ہی گر گئے۔

چار ٹسٹ میچوں کی سیریز میں 0۔1 سے پچھڑ ی ہندستانی ٹیم نے مہمان ٹیم کی برتری کو زیادہ بڑھنے کا موقع نہیں دیا اور جڈیجہ نے کمال کی گیند بازی کرتے ہوئے میتھیو ویڈ (40)، ناتھن لیون (صفر) اور جوش ہیزل وڈ (ایک) کے وکٹ نکال آسٹریلوی اننگز کو سمیٹ دیا۔جڈیجہ نے آسٹریلوی اننگز میں اپنے 21.4 اوور میں 63 رن پر چھ وکٹ نکالے۔ لیفٹ آرم اسپنر کے لیے یہ ٹیسٹ میں ساتواں موقع ہے جب انہوں نے اننگز میں پانچ یا اس سے زیادہ وکٹ نکالے ہیں۔روی چندرن اشون نے مشیل اسٹارک (26) کو آؤٹ کر کےاننگز میں اپنا دوسرا وکٹ حاصل کیا۔تیز گیند باز ایشانت شرما کو 48 رن اور امیش یادو کو 57 رن پر ایک ایک وکٹ حاصل ہوئی ۔

میچ میں صبح آسٹریلیائی ٹیم کے کل کے ناٹ آؤٹ بلے بازوں ویڈ نے 25 رنز اور اسٹارک نے 14 رنز سے اپنی اپنی اننگز کو آگے بڑھایا اور برتری بنانے کی کوشش کی۔دونوں بلے بازوں نے ابتدائی 45 منٹ کے کھیل میں تو کریز پر ڈٹے رہنے کی اچھی کوشش کی اور ساتویں وکٹ کے لیے 49 رنز کی شراکت بھی کی۔اس کے بعد اشون نے بہترین فٹ مارك ٹیکنالوجی سے اسٹارک کو آؤٹ کر 269 کے اسکور پر آسٹریلیا کا ساتواں وکٹ گرا دیا۔ اسٹارک 52 گیندوں میں دو چوکے لگا کر 26 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے اور اس کے بعد ویڈ بھی پانچ رنز کے اضافے کے بعد ہی پویلین لوٹ گئے۔ویڈ نے 113 گیندوں میں چار چوکے لگا کر 40 رنز بنائے اور جڈیجہ نے انہیں ایل بی ڈبلیو کر آٹھواں وکٹ بھی جلد حاصل کرلیا۔

ہندستانی کپتان وراٹ کو میچ کے دوسرے دن جڈیجہ کو اشون سے کم اوور دینے پر تنقید کا سامنا کر نا پڑا تھا لیکن دن کے نویں اوور میں جڈیجہ کو اس بار موقع مل گیا اور انہوں نے خود کو ثابت کرتے ہوئے تین وکٹ سستے میں جھٹک لئے جس سےآسٹریلیا کی برتری 100 کے پار نہیں پہنچ سکی۔ 28 سالہ جڈیجہ نے پھر آسٹریلیا کے 274 کے ہی اسکور پر لیون کو صفر پر ہی ایل بی ڈبلیو کر دیا جبکہ دو رن کے بعد ہیزل وڈ کو لوکیش راہل کے ہاتھوں کیچ کرایا۔تاہم ہیزل وڈ نے ہندوستانی اسپنر کو ہیٹ ٹرک کا موقع نہیں دیا۔لیون نو گیندوں میں ایک رن ہی شامل کرپائے اور پوری آسٹریلوی ٹیم 276 پر ڈھیر ہو گئی۔مہمان ٹیم کے اسکور میں 22 اضافی رنز کا بھی تعاون رہا۔

The short URL of the present article is: http://harpal.in/movnp

Check Also

جے این یو کے گمشدہ طالب علم نجیب کی والدہ فاطمہ نفس سمیت 35 افراد حراست میں،تاہم بعد میں رہا

Share this on WhatsApp نئی دہلی(ہرپل نیوز،ایجنسی)17۔اکتوبر۔ گزشتہ ایک سال سے لاپتہ جواہر لال نہرو …

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا. ضرورت کے کھیتوں ک* نشان لگا دیا گیا ہے