Breaking News
Home / اہم ترین / 5ریاستوں کے اسمبلی انتخابات کے نتائج آج تمام پارٹیاں جیت کی دعوے دار،ایگزٹ پول میں یوپی،اتراکھنڈ،گوا اور منی پور میں بی جے پی کاپلڑابھاری

5ریاستوں کے اسمبلی انتخابات کے نتائج آج تمام پارٹیاں جیت کی دعوے دار،ایگزٹ پول میں یوپی،اتراکھنڈ،گوا اور منی پور میں بی جے پی کاپلڑابھاری

نئی دہلی(ہرپل نیوز،ایجنسی)۔11مارچ: ایگزٹ پول کے نتائج کے بعد5ریاستوں خصوصاًاترپردیش میں سیاسی پارہ چڑھ گیا ہے،جہاں تمام پارٹیاں جیت کا دعویٰ کررہی ہیں وہیں مختلف اضلاع میں جیت کے لڈو کیلئے ہوٹلوں کو آرڈر ہونے لگے ہیں۔ایگزٹ پول میں5 ریاستوں میں سے 4ریاستیں یوپی،اترا کھنڈ،گوا اور منی پور میں بی جے پی سب سے بڑی پارٹی بن کر ابھررہی ہے وہیں پنجاب میں کانگریس اور عآپ کے درمیان زبردست مقابلہ اور بی جے پی کو زبردست شکست ایگزٹ پول میں دیکھنے کو مل رہی ہے ۔سماجوادی پارٹی کے رام گوپال یادو کے بعد اب نریش اگروال نے بھی اے این آئی سے کہا ہے کہ ہم اکثریت سے جیت رہے ہیں اور کس نے ہمارے خلاف سازش کی ہے اس کا انکشاف11 تاریخ کے بعد کریں گے۔ انہوں نے اکھلیش کے بی ایس پی سے اتحاد کے امکان سے انکار نہیں کرنے کی بات پر بھی صفائی دی۔انہوں نے کہا کہ سی ایم اکھلیش یادو کے بیان کو صحیح تناظر میں نہیں دیکھا گیا۔ ان کا کہنا ہے کہ سیاست میں کوئی مستقل دوست یا دشمن نہیں ہوتا۔ واضح رہے کہ اکھلیش یادو نے ایک انٹرویو میں انتخابی نتائج کے بعد بی ایس پی سے اتحاد سے انکار نہیں کیا ہے وہیں میڈیا رپورٹس کے مطابق اس پر رد عمل ظاہر کرتے ہوئے بی ایس پی سربراہ مایاوتی نے کہا ہے کہ نتائج کے بعد ضرورت پڑنے پر اکھلیش کی تجویز پر غور کریں گے۔ سماج وادی پارٹی کے لیڈر رام گوپال یادو نے کہا کہ ہم100 فیصد جیت رہے ہیں۔ ہمیں معلوم ہوا ہے کہ کچھ چینلز نے دباؤ میں ایگزٹ پول کے صحیح نتائج میں کچھ دن پہلے ہی تبدیلی کی ہے۔ وہیں ملائم سنگھ یادو نے بھی کہا کہ سماج وادی پارٹی کانگریس اتحاد کی یوپی میں اکثریت کی حکومت بنے گی اور اکھلیش یادو ہی وزیر اعلیٰ بنیں گے۔ان ایگزٹ پولوں کی بنیاد پر یوپی میں بی جے پی کو سب سے زیادہ211 نشستیں، ایس پی کانگریس اتحاد کو122 اور بی ایس پی کو61سیٹیں ملنے کا امکان ہے۔ پنجاب میں اکالی اتحاد کو 7، کانگریس 54اور آپ کو52 نشستیں ملنے کا اندازہ ہے۔ اتراکھنڈ میں بی جے پی کو42، کانگریس کو24اور دیگر کو4نشستیں ملنے کا اندازہ ظاہر کیا گیا ہے۔ گوا میں بی جے پی کو 18نشستیں، کانگریس کو 12اورAAPکو 3نشستیں ملنے کا اندازہ ہے۔ منی پور میں کانگریس کو26 بی جے پی کو24اور دیگر کو10 نشستیں ملنے کا اندازہ ظاہر کیا گیا ہے۔انڈیا نیوز۔ایم آرسی اور ٹائمز ناؤ ووی ایم آر کے ایگزٹ پول کے مطابق یوپی میں بی جے پی کو سب سے زیادہ سیٹیں ملنے کا امکان بتایاجا رہا ہے۔ انڈیا نیوز نے بی جے پی کو جہاں185 اور ٹائمس ناؤ نے210-190 نشستیں ملنے کا امکان ظاہر کیا ہے۔ وہیں اے بی پی۔لوک نیتئی سی ایس ڈی ایس کے مطابق بی جے پی اور ایس پی کانگریس اتحاد کے درمیان سخت مقابلے کے آثار ہیں۔ مجموعی طور پر403 رکنی اسمبلی میں رجحانات کے مطابق بی جے پی نمبر ون پارٹی بن سکتی ہے۔ ان کی بنیاد پراین ڈی ٹی وی کے مطابق یوپی میں بی جے پی کو سب سے زیادہ211 نشستیں، ایس پی کانگریس اتحاد کو122 اور بی ایس پی کو61 سیٹیں ملنے کا امکان ہے۔

بہارمیں بھی درست ثابت نہیں ہوئے تھے ایگزٹ پول:راہل:دریں اثناء کانگریس نائب صدر راہل گاندھی نے پانچ ریاستوں کے اسمبلی انتخابات کے ایگزٹ پول پر آج کہا کہ یہ پہلے بھی بہار اسمبلی انتخابات میں غلط ثابت ہو چکے ہیں اور دعویٰ کیا کہ اترپردیش میں کانگریس اور سماج وادی پارٹی کا اتحاد جیت رہا ہے ۔مسٹر گاندھی نے یہاں صحافیوں سے کہا’’ہمارا اتحاد اترپردیش اسمبلی کا الیکشن جیت رہا ہے ۔ ایگزٹ پول کو ہم نے بہار اسمبلی انتخابات میں بھی دیکھا ہے جہاں یہ غلط ثابت ہوئے ۔ کون جیتا ہے اور کون ہارا، اس کے بارے میں کل بات کریں گے جب انتخابات کے نتائج سامنے ہوں گے۔‘‘ایگزٹ پول پر اپنے پہلے ردعمل میں انہوں نے کہا کہ وہ اوپینین پول پر اپنا کوئی اوپینین نہیں دینا چاہتے ۔واضح رہے کہ پانچ ریاستوں کے اسمبلی انتخابات چار فروری کو شروع ہوئے تھے اور نو مارچ کو ختم ہوئے ہیں۔پولنگ ختم ہونے کے بعد کل ایگزٹ پول سامنے آئے جن میں زیادہ تر میں کانگریس کی شکست دکھائی گئی ہے ۔کانگریس کے ترجمان ابھیشیک منو سنگھوی نے بھی پارٹی کی معمول کی پریس بریفنگ میں نامہ نگاروں سے کہا کہ ایگزٹ پول2009میں بھی غلط ثابت ہوئے تھے ۔ اس کے بعد بہار اور تمل ناڈو اسمبلی انتخابات میں بھی ایگزٹ پول میں دکھائے گئے نتائج درست ثابت نہیں ہوئے تھے۔

The short URL of the present article is: http://harpal.in/r3fjb

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا. ضرورت کے کھیتوں ک* نشان لگا دیا گیا ہے