Home / اہم ترین / انکم ٹیکس کے نئے پورٹل پرششی تھرور نے حکومت پر سخت تنقید کی

انکم ٹیکس کے نئے پورٹل پرششی تھرور نے حکومت پر سخت تنقید کی

نئی دہلی : (ہرپل نیوز؍ایجنسی)7؍جولائی :۔ سینئر کانگریس لیڈر ششی تھرور نے نئے انکم ٹیکس پورٹل میں تکنیکی امور پر مرکز پر سخت ناراضگی کی ہے۔ انہوں نے الزام لگایاہے کہ 4200 کروڑ روپئے خرچ کرنے کے باوجود حکومت اس پورٹل کو زیادہ صارف دوست ، جدید اور بدیہی نہیں بنا سکتی ہے اور بے ترتیبی پیداکر سکتی ہے۔لوک سبھاممبرششی تھرور نے یہ بھی پوچھا ہے کہ جب پہلے والا پورٹل اچھا چل رہا تھا تو پھر اس نئے پورٹل کی کیا ضرورت تھی؟

ان کے مطابق ، ان کی سربراہی میں کانگریس کے ایک شعبے آل انڈیا پروفیشنل کانگریس سے تعلق رکھنے والے کچھ چارٹرڈ اکاؤنٹنٹ نے انہیں آگاہ کیا کہ انکم ٹیکس پورٹل میں ہونے والی تبدیلیوں کی وجہ سے متعدد خامیاں پیدا ہوگئیں اور لاگ ان ہونے میں معمول سے زیادہ لمباوقت لگتا ہے۔سابق مرکزی وزیر نے کہاہے کہ نئے پورٹل کہیں کہیں پھنس گئے ہیں جوغیرملکی رسیدوں پر مشتمل آئی ٹی آر ، 15 سی اے اور 15 سی بی فارم داخل کرنے میں رکاوٹ ہے۔

انہوں نے کہاہے کہ یہ واضح نہیں ہے کہ حکومت نے انکم ٹیکس پورٹل کو جون کے مہینے میں کیوں تبدیل کیا؟ بہتر ہوتا اگر اسے گذشتہ مالی سال کے اختتام پر یا نئے مالی سال کے آغاز پر تبدیل کردیا گیا ہو تا کہ ٹیکس دہندگان جو انکم ٹیکس کی واپسی کے حقدار ہیں اس مشکل وقت میں مددحاصل کرسکیں۔

حکومت کو نشانہ بناتے ہوئے ، تھرور نے سوال کیا کہ جب پرانا پورٹل برسوں سے آسانی سے چل رہا تھا تو نئے انکم ٹیکس پورٹل کی ضرورت کیوں تھی اور ایسا ایسے وقت میں کیوں کیا گیا جب عام طور پر ٹیکس دہندگان اپنا گوشوارہ جمع کرتے ہیں اور واپسی کا دعویٰ کرتے ہیں؟انہوں نے #ٹویٹ کرکے یہ بھی پوچھا کہ باقاعدہ آغاز سے قبل اس نئے پورٹل کا تجربہ کیوں نہیں کیا گیا۔

The short URL of the present article is: http://harpal.in/GfFlu

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا. ضرورت کے خانے پر* نشان لگا دیا گیا ہے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.