Home / اہم ترین / آرین خان کی ضمانت پر بامبے ہائی کورٹ میں کل ہوگی سماعت

آرین خان کی ضمانت پر بامبے ہائی کورٹ میں کل ہوگی سماعت

ممبئی: (ہرپل نیوز؍ایجنسی)26؍اکتوبر:کروز ڈرگس معاملے میں گرفتار بالی وڈ اداکار شاہ رخ خان کے بیٹے آرین خان کی ضمانت کی عرضی پر بامبے ہائی کورٹ میں منگل کو سماعت نامکمل رہی ہائی کورٹ ن اس معاملے میں آگے کی سماعت کے لئے بدھ ڈھائی بجے کا وقت طے کیا ہے آرین کی جانب سے عدالت میں سینئر وکیل اور سابق اٹارنی جنرل مکل روہتگی نے منگل کو اپنی دلیلیں پیش کیں اب اس معاملے میں بدھ کو یہ ملزم ارباز مرچنٹ کی ضمانت پر وکیل امت دیسائی اپنی دلیل پوری کریں گے۔

دیسائی آج بھی عدالت میں دلیل دے رہے تھے، تو عدالت نے ان سے پوچھا کہ آپ کو کتنا وقت لگے گا۔ دیسائی نے 45 منٹ کا وقت مانگا۔ نارکوٹکس کنٹرول بیورو (این سی بی) کی جانب سے پیش وکیل انل سنگھ نے بھی اپنی بات رکھنے کے لئے عدلت سے 45 منٹ کا وقت مانگا۔ اس کے بعد عدالت نے سماعت بدھ تک کے لئے ملتوی کردی۔

آرین کے وکیل روہتگی نے عدالت میں دلیل دی کہ مکل کے پاس کچھ نہیں ملا اور نہ ہی اس کا طبی معائنہ کرایا گیا جس سے یہ ظاہر ہو کہ وہ نشے میں تھا۔ انہوں نے کہا کہ ارباز مرچنٹ کے جوتوں سے 6 گرام چرس ملی ہے لیکن مجھے اس سے فرق نہیں پڑتا سوائے اس کے کہ وہ میرے آرین کا دوست ہیں۔ انہوں نے کہا کہ آرین کے خلاف کچھ نہیں ملا۔

مسٹر روہتگی نے 3 اکتوبر کو آرین کی گرفتاری کو غیر قانونی قرار دیتے ہوئے کہا کہ موبائل چیٹ میں کیا ہے یہ ثابت ہونا باقی ہے۔ انہوں نے دعویٰ کیا کہ چیٹ کا کروز ڈرگ پارٹی کیس سے کوئی تعلق نہیں ہے۔ اس کے بغیر کسی کو جیل میں نہیں رکھا جا سکتا۔

مسٹر روہتگی نے کہا ’’این سی بی پرانی چیٹ کا ذکر کررہی ہے اور اس کی بنیاد پر یہ کہہ رہی ہے کہ آرین کا تعلق کچھ لوگوں سے لینا دینا ہے۔ جب میں باہر تھا تو یہ بھی کہا جا رہا تھا کہ اس کا انٹرنیشنل لنک ہے، انہوں نے کہا کہ یہ بہت چھوٹا معاملہ ہے اور آرین کے گھر ولاے (والد) کی وجہ سے لڑکے کا معاملہ اتنا ہائی لائٹ کردیا گیا۔

انہوں نے کہا کہ قانون کہتا ہے کہ اگر نشہ ہو تب بھی اس شخص کی باز آبادی ہونی چاہیے۔ ایسے میں لوگوں کو جیل میں ڈالنے کی کوئی منشا نہیں ہونی چاہیے۔ انہوں نے بتایا کہ سماجی انصاف کی وزارت اصلاحات کی باتیں کرتی رہتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ آرین کی عمر 23 سال ہے اور اس نے کیلیفورنیا سے گریجویشن کی ہے۔

انہوں نے بتایا کہ وہ کورونا وائرس کی وجہ سے ہندوستان واپس آیا تھا۔ انہوں نے بتایا کہ آرین کروز کا کسٹمر بھی نہیں تھا۔ اسے مہمان کے طور پر گابا نے مدعو کیا تھا۔

The short URL of the present article is: http://harpal.in/mOCLF

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا. ضرورت کے خانے پر* نشان لگا دیا گیا ہے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.