Home / اہم ترین / راکیش ٹکیت کا الٹی میٹم: مرکزی حکومت کے پاس 26 نومبر تک کا وقت ، پھر دہلی سرحد پر تحریک مزیدتیز کریں گے

راکیش ٹکیت کا الٹی میٹم: مرکزی حکومت کے پاس 26 نومبر تک کا وقت ، پھر دہلی سرحد پر تحریک مزیدتیز کریں گے

نئی دہلی:(ہرپل نیوز؍ایجنسی) یکم نومبر: کسان لیڈر راکیش ٹکیت نے مرکزی حکومت کو 26 نومبر تک کا وقت دیتے ہوئے نیا الٹی میٹم دیا ہے اور کہا ہے کہ اس کے بعد کسان دہلی میں اپنا احتجاج مزیدتیز کریں گے۔ ٹکیت نے کہا ہے کہ 27 نومبر سے کسان گائوں سے ٹریکٹروں کے ذریعے دہلی کے چاروں طرف تحریک کے مقامات پر پہنچیں گے اور تحریک کو مزیدتیز کریں گے اور تحریک کے مقام پر خیموں کو بھی مضبوط کیا جائے گا۔اس سے پہلے تکیت نے کہا تھا کہ اگر دہلی کی سرحدوں سے کسانوں کو زبردستی ہٹانے کی کوشش کی گئی تو ہم سرکاری دفاتر کو اناج منڈی میں تبدیل کر دیں گے۔

راکیش ٹکیت نے یہ انتباہ دہلی کے غازی پور اور ٹکری بارڈر سے بیریکیڈ ہٹانے اور راستے کو مکمل طور پر کھولنے پرکسان رہنماؤں اور پولس انتظامیہ کے درمیان پیدا ہونے والے تعطل کے درمیان دیا ہے۔ٹکیت نے اپنے روایتی انداز میں دو دن کے اندر یہ دوسری وارننگ دی ہے۔ گزشتہ روز انہوں نے پولیس انتظامیہ کو خبردار کیا تھا کہ اگر کسانوں کو زبردستی ہٹایا گیا تو ہم سرکاری دفاتر کو اناج منڈی بنا دیں گے۔ ٹکیت نے الزام لگایا تھا کہ پولیس نے بیریکیڈ کے ساتھ ان کے کیمپ کو بھی اکھاڑ نے کی کوشش کی تھی، لیکن دہلی پولیس نے ان الزامات کو بے بنیاد قرار دیا ہے اور دعویٰ کیا ہے کہ کسی کسان کے خیمے کو نہیں ہٹایا گیا ہے۔

The short URL of the present article is: http://harpal.in/8Eytr

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا. ضرورت کے خانے پر* نشان لگا دیا گیا ہے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.