Home / اہم ترین / متھرا:مسجدعیدگاہ-کرشن جنم بھومی تنازعہ میں ایک کیس کی سماعت پر روک

متھرا:مسجدعیدگاہ-کرشن جنم بھومی تنازعہ میں ایک کیس کی سماعت پر روک

الہ آباد :(ہرپل نیوز؍ایجنسی)4؍اگست:الہ آباد ہائی کورٹ نے بدھ کے روز متھرا میں بھگوان کرشن کی حقیقی جائے پیدائش پر پوجا کی اجازت طلب کرنے سے متعلق ایک کیس کی سماعت پر روک لگا دی ہے۔نچلی عدالت میں مقدمہ چل رہا ہے اور شری کرشنا کی جائے پیدائش مبینہ طور پر ٹرسٹ مسجد عیدگاہ کے قبضے میں ہے۔ہائی کورٹ نے فریقین کو آئندہ سماعت تک جوابی حلف نامے داخل کرنے کی بھی ہدایت کی۔

سماعت کی اگلی تاریخ کا فیصلہ رجسٹرار بعد میں کریں گے۔یہاں یہ وضاحت ضروری ہے کہ مسجد عیدگاہ متھرا کو ایک طبقہ کرشن جنم بھومی قراردے رہا ہے اور اس کے حصول کے لئے وہ کورٹ میں گیا ہے۔جسٹس سلیل کمار رائے نے مذکورہ حکم یوپی سنی سنٹرل وقف بورڈ کی درخواست پر دیا۔ بورڈ نے متھرا ڈسٹرکٹ جج کے 19 مئی 2022 کے حکم کو چیلنج کیا تھا۔ اپنے 19 مئی کے حکم میں، نظرثانی عدالت نے ٹرائل کورٹ کو معاملے کی سماعت کرنے اور اس میں مناسب احکامات دینے کی ہدایت کی تھی۔

The short URL of the present article is: http://harpal.in/5YQ7P

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا. ضرورت کے خانے پر* نشان لگا دیا گیا ہے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.