Home / اہم ترین / مدارس کے نظام پر کامل اعتماد کر کے سرپرست اپنے بچوں کو دینی تعلیم سے بہرہ ور کریں جامعہ اسلامیہ بھٹکل کے ستاون ویں سالانہ اجلاس سے علما کے خطابات۔طلبہ کے سالانہ نتائج کا بھی اعلان

مدارس کے نظام پر کامل اعتماد کر کے سرپرست اپنے بچوں کو دینی تعلیم سے بہرہ ور کریں جامعہ اسلامیہ بھٹکل کے ستاون ویں سالانہ اجلاس سے علما کے خطابات۔طلبہ کے سالانہ نتائج کا بھی اعلان

بھٹکل ( ہرپل نیوز )3مئی:مداراس کے قیام کا مقصد ہی یہی تھا کہ لوگوں میں دین کی سمجھ بوجھ پیدا کریں، علمی، عملی اور فکری طور پر ایسے علماء کو تیار کریں جو دین کو اپنا اوڑھنا بچھونا بنائیں۔ جامعہ اسلامیہ بھٹکل کے ستاون ویں سالانہ اجلاس

سے خطاب کرتے ہوئے استاذ جامعہ مولانا عبد العلیم خطیب ندوی نے ان خیالات کا اظہار کیا ۔ مولانا نے علماء کرام کو ان کی ذمہ داریاں یاددلاتے ہوئے کہاکہ وہ دینی تعلیمات کو فروغ دیں، جو ذمہ داری ان کے سپرد کی گئی ہے اس کو آگے بڑھانے کے لیے نئی نسل کو تیار کریں ،۔ انہوں نے سرپرستوں سے کہا کہ اللہ نے آپ کی اولاد کو دین کے لیے منتخب کیا ہے یہ اللہ کا بہت بڑا انعام ہے، آپ بچپن سے ہی ان کے اندر دینی فکر کو پیوست کریں، دین کے لیے ان کو فارغ کریں، تاکہ وہ قوم کے رہنام اور قائد بن کر ابھریں، اگر ہم مدارس کے نظام پر کامل اعتماد کرتے ہوئے اپنے بچوں کو یکسو کریں گے، اساتذہ و ذمہ داران کا تعاون کرتے ہوئے ان کی صحیح فکر کریں گے تو اس کے نتائج بھی سو فیصد برآمد ہوں گے، اور اگر ان کو دوسری نوعیتوں کی مشغولیات میں منہمک کرتے ہوئے ان سے اچھے نتائج کی امید خام خیالی ہے۔اس سے پہلے جامعہ کے رکن شوری مولانا ڈاکٹر عبدالحمید اطہر ندوی نے حاضرین کا استقبال کیا اور طلبہ کو نئے عزم کے ساتھ آگے بڑھنے کی تلقین کی۔حسب روایت مہتمم جامعہ مولانا مقبول احمد کوبٹے ندوی نے سالانہ رپورٹ پیش کرتے ہوئے محسنین و معاونین کا شکریہ ادا کیا۔ اپنی گفتگو میں انہوں نے مکاتب اور جامعہ آباد کا مجموعی نتیجہ بھی پیش کیا۔
اس موقع پر ناظم جامعہ ماسٹر شفیع شہ بندری ، نائب ناظم جامعہ مولانا طلحہ رکن الدین ندوی، رکن شوریٰ مولانا عبدالعلیم قاسمی وغیرہم نےموقع کی مناسبت ست بات کرتے ہوئے طلبہ و سرپرستوں کو مفید نصیحتیں کیں، اور جامعہ کا ہر طرح سے تعاون کرتے رہنے کی درخواست کی۔
اخیر میں استاد جامعہ مولانا رحمت اللہ رکن الدین ندوی نے شعبۂ عالیہ اور حفظ کے اور صدر مدرس شعبۂ ثانویہ مولانا عبدالسمیع آرمار ندوی نے ثانویہ کے نتائج کو پیش کیا۔اجلاس کا آغاز جعفر زیان شریف کی تلاوت اوراصغر احمد صدیقی کی نعت خوانی سے ہوا تھا۔ صدر جامعہ مولانا محمد اقبال ملا ندوی کی دعا پر قبل از ظہر محفل کا اختتام ہوا۔ استاد جامعہ مولانا عبداالمحیط خطیب ندوی نے اجلاس کی نظامت کی ۔
جامعہ اسلامیہ کے علاقات عامہ کی طرف سے جاری اعدا و شمار کے مطابق سال رواں کے نتائج اس طرح ہیں :
مکتب جامعہ اسلامیہ چوک بازار %93
مکتب جامعہ اسلامیہ نوائط کالونی%95
مکتب جامعہ اسلامیہ کارگدے %96
مکتب جامعہ اسلامیہ بدریہ کالونی %100
شعبۂ ثانویہ جامعہ آباد %74
شعبۂ عالیہ جامعہ آباد %84
شعبۂ حفظ جامعہ آباد %90

The short URL of the present article is: http://harpal.in/19gWI

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا. ضرورت کے خانے پر* نشان لگا دیا گیا ہے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.