Home / اہم ترین / ممبئی: چرچ کے غیر قانونی چلڈرن ہوم سے 45 بچے بازیاب

ممبئی: چرچ کے غیر قانونی چلڈرن ہوم سے 45 بچے بازیاب

ممبئی:(ہرپل نیوز؍ایجنسی)3؍دسمبر: مہاراشٹر کی راجدھانی ممبئی کے مضافاتی علاقے سی ووڈ، نوی ممبئی میں واقع سینٹ بیتھل چرچ میں چلنے والے ایک غیر قانونی چلڈرن ہوم سے 45 بچوں کو بازیاب کرایا گیا ہے۔ نیشنل چائلڈ رائٹس پروٹیکشن کمیشن (این سی پی سی آر) کے سربراہ پرینک کاننگو نے ٹویٹ کرکے اس کی اطلاع دی۔پرینک قانون گو نے ٹویٹ کیا کہ نوی ممبئی میں بیتھل گوسپل چرچ کے زیر انتظام غیر قانونی چلڈرن ہوم سے 45 بچوں کو بچایا گیا ہے، جسے این سی پی سی آر کی سفارشات کی بنیاد پر بلڈوزر کے ذریعے منہدم کر دیا گیا تھا۔

بتا دیں کہ اس چرچ کے پادری پر 4 لڑکیوں نے جنسی استحصال کا الزام لگایا گیا تھا۔ اس سلسلے میں چرچ کے پادری راج کمار یشوداسن کو گرفتار کر لیا گیاتھا۔ پادری کی گرفتاری کے بعد چرچ کی قانونی حیثیت پر سوالات اٹھنے لگے۔ اس بارے میں بی جے پی مہاراشٹر مہیلا مورچہ کی ریاستی صدر چترا باغ نے اس چرچ کو منہدم کرنے کا مطالبہ کیا تھا۔اس کے بعد جمعہ کو نئی ممبئی میونسپل کارپوریشن اور سڈکو کے اہلکار چرچ کے احاطے میں پہنچے اور یہاں کئی بے ضابطگیاں دیکھیں۔ اس کے بعد جمعہ کو میونسپل کارپوریشن اور سڈکو کی مشترکہ کارروائی میں اس چرچ کو مسمار کر دیا گیا۔

The short URL of the present article is: http://harpal.in/bM0o7

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا. ضرورت کے خانے پر* نشان لگا دیا گیا ہے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.