Home / اہم ترین / نائیجیریا: آئل ریفائنری میں دھماکہ، 100 سے زائد افراد کی المناک موت

نائیجیریا: آئل ریفائنری میں دھماکہ، 100 سے زائد افراد کی المناک موت

ایمو :(ہرپل نیواز/ایجنسی)24؍اپریل: نائیجیریا کی جنوبی ریاست ایمو میں ایک غیر قانونی آئل ریفائنری میں دھماکے سے 100 سے زائد افراد ہلاک ہو گئے ہیں۔ یہ اطلاع سرکاری اور مقامی ذرائع نے دی۔ ژنہوا نیوز ایجنسی نے رپورٹ کیا ہے کہ یہ دھماکہ جمعہ کو دیر گئے اگبیما مقامی حکومت کے علاقے میں ایک غیر قانونی آئل ریفائنری میں ہوا، جو جنوبی ریاستوں ایمو اور دریاؤں کے درمیان سرحدی علاقہ ہے۔ ایک اہلکار نے ہفتے کے روز بتایا کہ اب تک 100 سے زائد افراد کی ہلاکت کی تصدیق ہو چکی ہے۔

ایمو میں پٹرولیم وسائل کے کمشنر گڈ لک اوپیا نے ژنہوا کو بتایا کہ "غیر قانونی آئل ریفائنری پر لگنے والی آگ نے 100 سے زائد افراد کو متاثر کیا ہے، جن کی شناخت ابھی باقی ہے۔” اوپیا نے کہا کہ غیر قانونی آئل ریفائنری کا آپریٹر مفرور ہے۔ ایک کمیونٹی لیڈر اور آئل اینڈ گیس پروڈکشن ایریاز کی سپریم کونسل کے چیئرمین جنرل کولنز اے جی کے مطابق، ایمو اور دریاؤں کی ریاستوں کے درمیان جنگل میں اچانک دھماکے کی آواز سنی گئی۔

اجی نے ژنہوا کو بتایا کہ "یہ بدقسمتی کی بات ہے۔ یہ ایک المیہ ہے جس کے بارے میں کوئی سوچ بھی نہیں سکتا تھا کہ اب تک تقریباً 108 جلی ہوئی لاشیں گنی جا چکی ہیں،” اس طرح کی غیر قانونی آئل ریفائنریز تیل کمپنیوں کی ملکیت والی پائپ لائنوں سے خام تیل نکال کر اور دیسی ساختہ ٹینکوں کے ذریعہ تیل کی پیداوار کرتی ہیں۔ نائیجیریا میں تیل کی پائپ لائن میں تخریب کاری اور تیل کی چوری کی اکثر رپورٹیں آتی رہتی ہیں جس سے بھاری معاشی نقصان ہوتا ہے۔

The short URL of the present article is: http://harpal.in/nExXi

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا. ضرورت کے خانے پر* نشان لگا دیا گیا ہے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.