Home / اہم ترین / نتن گڈکری نے بنیادی ڈھانچے کی ترقی کے لیے مرکزی اورریاستی حکومتوں کے درمیان تعاون پر زور دیا

نتن گڈکری نے بنیادی ڈھانچے کی ترقی کے لیے مرکزی اورریاستی حکومتوں کے درمیان تعاون پر زور دیا

نئی دہلی:(ہرپل نیوز؍ایجنسی)18؍جنوری:مرکزی وزیر سڑک ٹرانسپورٹ اور شاہراہوں کے نتن گڈکری نے ملک کے بنیادی ڈھانچے کی ترقی کے لیے مرکزی اور ریاستی حکومتوں کے درمیان تعاون پر زور دیا۔ انہوں نے کہاہے کہ بنیادی ڈھانچے کی ترقی بھارت کو 5 کھرب والی معیشت بننے کے وڑن کو پورا کرنے میں اہم کردار ادا کرے گی۔سڑک ٹرانسپورٹ اور شاہراہوں کی وزارت (ایم او آر ٹی ایچ) کے زیر اہتمام جنوبی زون کے لیے پی ایم-گتی شکتی کے موضوع پر ایک کانفرنس کا افتتاح کرتے ہوئے، انہوں نے کہا کہ ریاست اور مرکز کے درمیان تعاون اور مواصلات کو وسعت کی ضرورت ہے۔ انہوں نے پروگرام کو کامیاب بنانے کے لیے ریاستوں کی تجاویز کا خیر مقدم کیا۔کرناٹک کے وزیراعلیٰ بی ایس بومئی نے اپنے خطاب میں اس بات کی طرف اشارہ کیا کہ اب وقت آگیاہے کہ بھارتی حکومت اور ریاستوں کے بڑے بڑے پروجیکٹوں میں تعاون اور ہم آہنگی پیدا کی جائے۔

انہوں نے مرکز پر زور دیا کہ وہ زیادہ سے زیادہ سرمایہ کاری کے لیے کلیئرنس کو تیز کرنے اور مالیاتی شعبے میں قوانین میں نرمی کرے۔پڈوچیری کی لیفٹیننٹ گورنر (ایل جی) ڈاکٹر تملائی سندرراجن نے کہاہے کہ ملٹی موڈل کنیکٹیویٹی لوگوں اور سامان کی نقل و حرکت کے لیے رابطے کو آسان بنائے گی۔ پڈوچیری کے وزیر اعلیٰ این رنگاسامی نے پڈوچیری آنے والے لوگوں کے لیے ٹریفک کی بھیڑ بھاڑ، ہیلی پیڈ خدمات اور ہوائی اڈے کی سہولیات کو کم کرنے کے لیے ایلیویٹڈ کوریڈور پروجیکٹ کی اہمیت کے بارے میں بات کی۔اپنے کلمات میں، ریاستی وزیر (آر ٹی ایچ اور شہری ہوا بازی) کے وزیرمملکت جنرل (ریٹائرڈ) ڈاکٹر وی کے سنگھ نے کہاہے کہ پی ایم-گتی شکتی کا مقصد ہندوستان میں ملٹی ماڈل کنیکٹیویٹی کو فروغ دینا ہے۔آندھرا پردیش کے صنعت، کامرس اور آئی ٹی کے وزیرایم گوتم ریڈی نے کہاہے کہ ان کی ریاست ملک میں دوسرے سب سے بڑی راہ داری کے ساتھ بڑی معیشت بننے کے بھارت کے وژن کو عملی جامہ پہنانے میں اپنا تعاون دے سکتی ہے۔ پی ایم-گتی شکتی کے بارے میں بات کرتے ہوئے، انہوں نے کہاہے کہ بھارت میں سازو سامان کی لاگت اب بھی جی ڈی پی کا 14 فیصد ہے جبکہ عالمی اوسط 8 فیصد ہے اور وزیر اعظم اس لاگت کو کم کرنے کے لیے عہد بستہ ہیں۔ انہوں نے کہاہے کہ اس پروگرام سے اس مقصد کو حاصل کرنے میں مددملے گی۔ کیرالہ کے تعمیرات عامہ اورسیاحت کے محکمے کے وزیر پی اے محمد ریاس نے کہا کہ ایک مضبوط اور لچکدار بنیادی ڈھانچہ کسی ملک کی اقتصادی ترقی کے لیے بنیادی حیثیت رکھتا ہے اور پی ایم-گتی شکتی اس کے سازو سامان منظرنامے کو بدل دے گی۔ انہوں نے کہا کہ کیرالہ ملٹی ماڈل کنیکٹیویٹی کی ترقی کے لیے ساز گار منظر نامہ پیش کرتا ہے۔

The short URL of the present article is: http://harpal.in/UPng1

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا. ضرورت کے خانے پر* نشان لگا دیا گیا ہے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.