Home / اہم ترین / کرناٹک میں ان لاک2کا اعلان:16اضلاع میں مزید نرمی، شام 5بجے تک تمام دکانیں کھولنے کی اجازت۔ عبادت گاہیں،تعلیمی ادارے، شاپنگ مالس، تفریحی پارکس، سنیما گھرکھولنے کی اجاز ت نہیں

کرناٹک میں ان لاک2کا اعلان:16اضلاع میں مزید نرمی، شام 5بجے تک تمام دکانیں کھولنے کی اجازت۔ عبادت گاہیں،تعلیمی ادارے، شاپنگ مالس، تفریحی پارکس، سنیما گھرکھولنے کی اجاز ت نہیں

بنگلورو: (ہرپل نیوز؍ایجنسی) 20؍جون:۔ ریاست کرناٹک میں 21جون سے دوسرے مرحلہ کے ان لاک کا آغاز ہورہا ہے۔ جن اضلاع میں 5فی صد سے کم پازیٹی ویٹی ہے، ان اضلاع میں پہلے ان لاک کرنے کا حکومت نے آج فیصلہ کیا ہے جس کا وزیراعلیٰ بی ایس ایڈی یورپا نے اعلان کیا۔ لاک ڈاؤن میں مزید نرمی دینے سے متعلق آج شام وزیراعلیٰ کے سرکاری دفتر کرشنا میں وزیراعلیٰ کی صدارت میں منعقدہ کووڈ کے انچارج وزراء اور متعلقہ افسروں کے اجلاس کے بعد یہ اعلان کیا گیا ہے۔ اس اجلاس کے بعد میڈیا کو خطاب کرتے ہوئے ایڈی یورپا نے کہاکہ 16/اضلاع جن میں شمالی کنڑا،بلگاوی، منڈیا، ٹمکور، باگل کوٹ، کلبرگی، کوپل، چک بالاپور، گدگ، بنگلور اربن، کولار، رائچور، ہاویری، رام نگرم، یادگیر، بیدر شامل ہیں جہاں پازیٹی ویٹی کی شرح 5فی صد سے کم ہے۔ 21جون تا 5جولائی ان لاک کیا جارہا ہے۔ 13اضلاع جہاں پازیٹی ویٹی کی شرح 5فی صد سے زیادہ اور10 فی صد سے کم ہے، لاک ڈاؤن جاری رہے گا اور گائیڈ لائنس وہی ہیں جو پچھلے دنوں جاری کئے گئے تھے۔ میسور ضلع میں کورونا پازیٹی ویٹی 10فی صد سے زیادہ ہے اس لئے لاک ڈاؤن سخت پابندیوں کے ساتھ جاری رہے گا۔ بشمول بنگلور مذکورہ 16اضلاع میں بروز پیر 21جون سے 50فی صد مسافروں کے ساتھ سرکاری بسوں پرائیویٹ بسوں اور میٹرو ریل سروس کی اجازت رہے گی۔ ان اضلاع میں صبح 6تا شام 5بجے تمام دکانیں کھولنے کی گنجائش رہے گی۔ جب کہ ہوٹلس، ریسٹورنٹس، شراب کے بغیر، لاڈجس، کلبس، جیم 50فی صد گاہکوں کے ساتھ شام 5بجے تک کھولنے کی اجازت رہے گی۔ سرکاری اور پرائیویٹ دفاتر50 فی صد ملازمین کی حاضری کے ساتھ کام کرسکتے ہیں۔ لاڈجس اور ریسارٹس 50 فی صد گنجائش کے ساتھ کھولے جاسکتے ہیں۔ شام 7بجے تا صبح 5بجے رات کا کرفیو جاری رہے گا۔ ریاست بھر میں ویک اینڈ کرفیو بروز جمعہ شام7بجے تا بروز پیر صبح 5بجے جاری رکھا گیا ہے۔ شرابیوں کو شراب خانوں میں بیٹھ کر پینے کی اجازت نہیں البتہ پارسل لے جاسکتے ہیں۔

The short URL of the present article is: http://harpal.in/fsWTq

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا. ضرورت کے خانے پر* نشان لگا دیا گیا ہے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.