Home / اہم ترین / کشمیر ٹارگٹ کلنگ:بھارت کو ہندو راشٹر قرار دینے کا زعفرانی مطالبہ

کشمیر ٹارگٹ کلنگ:بھارت کو ہندو راشٹر قرار دینے کا زعفرانی مطالبہ

پٹنہ: (ہرپل نیوز؍پریس ریلیز)25؍اکتوبر:وادی کشمیر میں مبینہ دہشت گردوں کے ہاتھوں بہاری مزدوروں کے قتل کا معاملہ بہار کی سیاست میں زور پکڑتا جا رہا ہے۔ اس ٹارگٹ کلنگ پر پر بی جے پی لیڈر (سیاسی مفاد کے تحت )کافی ناراض بھی نظر آرہے ہیں۔

بی جے پی ایم ایل اے نے دہشت گردوں کے خاتمہ کا مطالبہ کرتے ہوئے ہندوستان کو ہندو راشٹر قرار دینے کا مطالبہ کرڈالا۔واضح ہو کہ کشمیر میں آرٹیکل 370کے خاتمہ کے وقت بھاجپا کی مودی سرکار نے یہ اعلان کیا تھا کہ اس مخصوص آرٹیکل 370کے خاتمہ کے بعد دہشت گردی کی کمر ٹوٹ جائے گی ، لیکن محض تین سال میں ہی دہشت گردی کی ’نئی شکل ‘ کی دریافت بی جے پی کے لئے باعث تضحیک ہے ۔

بی جے پی کی حلیف جنتا دل یونائیٹڈ (جے ڈی یو) نے بھی اپنے سر ملائے ہیں ۔ بی جے پی ایم ایل اے ہری بھوشن ٹھاکر نے کہا ہے کہ اگر دہشت گردی سے لڑنا ہے تو پہلے ہندوستان کو ہندو راشٹربنانا ہوگا۔ انہوں نے نہ صرف ہندوستان کو ہندوراشٹر قرار دینے کا مطالبہ کیا ہے بلکہ یہاں رہنے والی اقلیتوں کے لیے پاکستان اور بنگلہ دیش جیسے قوانین بنانے کا مطالبہ کیا ہے۔

ان کا مطالبہ ہے کہ جس طرح بنگلہ دیش اور پاکستان میں ہندو اقلیت ہیں اور ان کے لیے وہی قانون ہندوستان میں مسلمانوں کے لیے بنایا جائے۔وزیر اعلیٰ نتیش کمار بھلے ہی کھل کر بی جے پی کے اس مطالبے کی حمایت نہ کریں لیکن ان کی پارٹی کے ایم ایل اے بی جے پی کے سر میں سر ملاتے ہوئے نظر آ رہے ہیں۔

جے ڈی یو کے ایم ایل اے ڈاکٹر سنجیو کمار کے مطابق تب ہندوستان صرف ہندوؤں کا ملک ہوگا۔ ہندوؤں کے علاوہ جو بھی اس ملک میں رہتا ہے، وہ حملہ آور ہے۔ وہ ہندوستان پر حملہ آور ہوئے ، اوروہ یہیں کے ہو کر رہ گئے ۔

بی جے پی ایم ایل اے ہری بھوشن ٹھاکر اور جے ڈی یو ایم ایل اے سنجیو کمار کے علاوہ بی جے پی لیڈر اور سابق وزیر رانا رندھیر کا بھی ماننا ہے کہ ہندوستان سناتن دھرم کو ماننے والوں کا ملک ہے اور یہاں رہنے والے سبھی سناتن دھرم کے لوگ ہیں۔اب یہ وقت ہی بتائے گا ملک کو ’ہندوراشٹر ‘ بنائے جانے کے بعد کون سی ترقی ہوئی،آخر پٹرول 50روپے لیٹر ملتا ہے یا آج کی طرح 112روپے لیٹر ملے گا ۔

The short URL of the present article is: http://harpal.in/zIosN

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا. ضرورت کے خانے پر* نشان لگا دیا گیا ہے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.