Home / اہم ترین / کورونا کا مضحکہ اُڑانے والے اننت کمار ۔خودہی ہوگئے کووڈ کا شکار۔ کمٹہ ایم ایل اے بھی نکلے پوزیٹیو

کورونا کا مضحکہ اُڑانے والے اننت کمار ۔خودہی ہوگئے کووڈ کا شکار۔ کمٹہ ایم ایل اے بھی نکلے پوزیٹیو

نئی دہلی(ہرپل نیوز،ایجنسی) 14،ستمبر : کینرا رکن پارلیمان اننت کمار ہیگڈے کے بارے میں پتہ چلا ہے کہ پارلیمنٹ کے مانسون سیشن سے قبل کی گئی اراکین پارلیمان کی کووڈ 19 جانچ میں ان کی رپورٹ پوزیٹیو نکلی ہے۔ان کے علاوہ میناکشی لیکھی ، پرویش صاحب سنگھ سمیت جملہ 16اراکین کی رپورٹ پوزیٹیو نکلنے کی خبر ہے۔
جن اراکین پارلیمنٹ کی کووڈ رپورٹ پوزیٹیو نکلی ہے ان میں وائی آر ایس کانگریس کے دواراکین، شیوسینا، ڈی ایم کے اور آر ایل پی کے ایک ایک رکن شامل ہیں، جبکہ بی جے پی کے کُل 12اراکین کورونا سے متاثر پائے گئے ہیں۔اننت کمار نےکووڈ پروٹوکو ل کے مطابق کسی بھی پروگرام یا جلسے میں چہرے پر ماسک استعمال کرنا ضروری نہیں سمجھا تھا بلکہ انہوں نےطنزیہ انداز میں فقرہ کستے ہوئے ماسک پہننے والوں کو رامائن کے ’بندر ‘قرار دیاتھا۔ اب دیکھنا یہ ہے کہ خودکی رپورٹ پوزیٹیو نکلنے کے بعد وہ آئسولیشن میں رہنے کے علاوہ چہرے پر ماسک لگانے کے بعد اپنے آپ کو کیا نام دیتے ہیں۔
خیال رہے کہ کینرا رکن پارلیمان اننت کمار ہیگڈے نے کچھ دن پہلے ایک پروگرام کے دوران کوروناکا مضحکہ اڑاتے ہوئے کہا تھا کہ یہ معمولی سردی ، بخار کے سوا کچھ نہیں ہے اور خواہ مخواہ اس کو ایک بھوت بناکر پیش کیا جارہا ہے۔انہوں نے کہا تھا کہ سردردی بخار کے لئے معائنہ کرنے پر بھی کورونا وائرس لاحق ہونے کی بات کہی جارہی ہے۔
دوسری جانب ضلع شمالی کینرا میں سیاسی قائدین کورونا کی لپیٹ میں آنے کا سلسلہ ابھی جاری ہے۔ اس مرتبہ رکن اسمبلی دینکر شیٹی کے بارے میں پتہ چلا ہے کہ وہ بھی کووِڈ کا شکار ہوگئے ہیں اور علاج کے لئے انہیں منی پال اسپتال میں داخل کیا گیا ہے۔اس سے پہلے یلاپور رکن اسمبلی اور ضلع انچارج وزیر شیورام ہیبار کے علاوہ بھٹکل کے رکن اسمبلی سنیل نائک بھی کووڈ کے مرض میں مبتلا ہونے کے بعد صحت یا ب ہوچکے ہیں۔بتایا جا تا ہے کہ حالیہ دنوں میں دینکر شیٹی کے کسی رشتے دار کو کورونا لاحق ہوگیا تھا۔ شبہ ہے کہ اس مریض سے رابطے کی وجہ سے ہی دینکر شیٹی میں بھی یہ وائرس سرایت کرگیا ہوگا۔اب رکن اسمبلی دینکر شیٹی کی کووڈ رپورٹ پوزیٹیو آنے کے بعد کمٹہ میونسپالٹی کے چیف آفیسر نےگزشتہ ایک ہفتے کے دوران رکن اسمبلی سے رابطہ میں آئے ہوئے سرکاری افسران، عوامی نمائندوں اور عوام سے درخواست کی ہے وہ خود ہی اپنے طور پر آگے بڑھ کرسرکاری اسپتال پہنچ جائیں اور اپنا اپنا کووڈ ٹیسٹ کروالیں۔

The short URL of the present article is: http://harpal.in/Kxrui

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا. ضرورت کے خانے پر* نشان لگا دیا گیا ہے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.