Home / اہم ترین / کیا 15اپریل کو ختم ہوجائے گا لاک ڈاون؟ اروناچل پردیش کے وزیراعلی نے کیوں ڈیلیٹ کیا اپناٹویٹ۔اپریل 3کو وزیراعظم جاری کرینگے ایک ویڈیو پیغام۔

کیا 15اپریل کو ختم ہوجائے گا لاک ڈاون؟ اروناچل پردیش کے وزیراعلی نے کیوں ڈیلیٹ کیا اپناٹویٹ۔اپریل 3کو وزیراعظم جاری کرینگے ایک ویڈیو پیغام۔

نئی دہلی( ہرپل نیوز، ایجنسی) 2اپریل :کورونا وائرس کے قہر کے پیش نظر جمعرات کو وزیر اعظم نریندر مودی نے ریاستوں کے وزرائے اعلی اور مرکز کے زیر انتظام خطوں کی انتظامیہ کے ساتھ ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعہ بات چیت کی اور موجودہ حالات کا جائزہ لیا ۔ اس دوران اس ویڈیو کانفرنسنگ میں دیگر وزرائے اعلی کے ساتھ ساتھ موجود اروناچل پردیش کے وزیر اعلی پیما کھانڈو نے لاک ڈاون پر کچھ ایسا ٹویٹ کردیا ، جو سرخیوں کا حصہ بن گیا ۔ حالانکہ کھانڈو نے بعد میں ٹویٹ ہٹا دیا اور ایک دیگر ٹویٹ میں اس کی وضاحت کی ۔

وزیر اعظم کے ساتھ ہوئی میٹنگ کا ایک ویڈیو شیئر کرتے ہوئے کھانڈو نے لکھا کہ لاک ڈاون 15 اپریل کو پورا ہوجائے گا ، لیکن اس کا مطلب یہ نہیں ہے کہ لوگ سڑکوں پر گھومنے کیلئے آزاد ہوں گے ۔ انہیں اپنی ذمہ داری اور سماجی دوری کا خیال رکھنا ہوگا ۔ کورونا سے لڑنے کا یہی واحد ذریعہ ہے ۔اس کے بعد کھانڈو نے یہ ٹویٹ ہٹا دیا اور پھر وضاحت کرتے ہوئے لکھا کہ لاک ڈاون کی مدت کے پیش نظر کیا گیا ٹویٹ ایک افسر کے ذریعہ کیا گیا تھا ، جس کی ہندی سمجھ محدود ہے ، ایسے میں اس ٹویٹ کا ہٹا دیا گیا ۔

دوسری طرف پی ایم مودی نے اپنے ٹویٹر اکاؤنٹ پرجانکاری دی ہے کہ کہ وہ 3 اپریل کو صبح 9 بجے ملک کے شہریوں کے لئے ایک ویڈیو پیغام جاری کریں گے۔ ہم آپ کو بتادیں کہ اس سےپہلے ، ملک کے عوام سے خطاب کے دوران ، وزیراعظم نریندرمودی نے ملک میں 21 دن کے لاک ڈاؤن کا اعلان کیا تھا۔

یاد رہے کہ وزیر اعظم نریندر مودی نے جمعرات کے روز کورونا وائرس کی وباء اور اس سے متعلق اقدامات پر تبادلہ خیال کیا اور واضح کیا کہ پورے ملک کا مشترکہ ہدف کم سے کم جانی نقصان کو یقینی بنانا ہے۔

وزیر اعظم نے وزرائے اعلیٰ سے کہا کہ اگلے چند ہفتوں میں کورونا وائرس سے متعلق تحقیقات ، متاثرہ افراد کا پتہ لگانے ، ان کو الگ تھلگ رکھنے پر توجہ پر زور دیاہے۔وزیر اعظم نے ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے ریاستوں کے وزرائے اعلیٰ سے کہا کہ ریاستوں اور مرکز کو لاک ڈاؤن ختم ہونے پر لوگوں کے گھر سے نکلنے کو مد نظر رکھتے ہوئے حکمت عملی مرتب کی جانی چاہیے۔

کورونا وائرس کے خلاف جنگ میں مربوط کوششوں کی ضرورت پر روشنی ڈالتے ہوئے وزیر اعظم نے کہا ، 'ضلعی سطح پر ڈیزاسٹر مینجمنٹ گروپس تشکیل دیئے جائیں۔ اس کے ساتھ ہی ضلعی مانیٹرنگ آفیسرز کو بھی مقرر کرنے کی ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ کورونا سے متعلق ڈیٹا صرف تسلیم شدہ لیبارٹریوں سے لیا جانا چاہئے۔ اس سے ضلع ، ریاست اور مرکز کی سطح پر اعداد و شمار میں یکسانیت آئے گی۔بشکریہ نیوز ۱۸ اردو

The short URL of the present article is: http://harpal.in/AKLlc

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا. ضرورت کے خانے پر* نشان لگا دیا گیا ہے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.