Home / اہم ترین / ہماچل اورراجستھان میں کانگریس کا کلین سویپ،آسام اورمدھیہ پردیش میں بی جے پی ۔ترنمول نے بنگال میں تمام سیٹیں جیتیں،کرناٹک میں کانگریس اور بی جے پی کو ایک ایک سیٹ

ہماچل اورراجستھان میں کانگریس کا کلین سویپ،آسام اورمدھیہ پردیش میں بی جے پی ۔ترنمول نے بنگال میں تمام سیٹیں جیتیں،کرناٹک میں کانگریس اور بی جے پی کو ایک ایک سیٹ

نئی دہلی:(ہرپل نیوز؍ایجنسی) 3؍نومبر: بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) اور اس کی اتحادی پارٹی نے آسام کی پانچ اسمبلی سیٹوں کے ضمنی انتخابات میں تمام سیٹوں پر کامیابی حاصل کی ہے، جب کہ ہماچل پردیش میں کانگریس نے ایک لوک سبھا اور تین اسمبلی سیٹوں پر کامیابی حاصل کی ہے۔ بی جے پی نے چاروں سیٹیں جیت کر ریاست میں حکمراں بی جے پی کو شکست دی۔کانگریس نے راجستھان میں بھی اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے دھریاواڑ اور ولبھ نگر دونوں اسمبلی سیٹوں پر کامیابی حاصل کی ہے۔مغربی بنگال میں حکمراں ترنمول کانگریس نے چاروں اسمبلی سیٹوں – دنہاٹا، گوسابہ کھردہ اور شانتی پور پر کامیابی حاصل کی ہے۔ مدھیہ پردیش میں حکمراں پارٹی بی جے پی نے کھنڈوا پارلیمانی حلقہ اور جوبٹ اور پرتھوی پور اسمبلی حلقوں پر کامیابی حاصل کی ہے، جب کہ رائے گاؤں اسمبلی سیٹ پر شروع میں پیچھے رہنے والی کانگریس نے آخر کار کامیابی حاصل کر لی ہے۔انڈین نیشنل لوک دل (آئی این ایل ڈی) کے ایم ایل اے ابھے چوٹالہ نے ہریانہ کی ایلن آباد اسمبلی سیٹ کے ضمنی انتخاب میں اپنے قریبی حریف بھارتیہ جنتا پارٹی-جن نائک جنتا پارٹی کے امیدوار، حکمران اتحاد کے امیدوار گوبند کنڈا کو 6708 ووٹوں سے شکست دی۔جنتا دل یونائیٹڈ (جے ڈی یو) کے امن بھوشن ہزاری نے بہار کے کشیشوراستھان (ریزرو) اسمبلی حلقہ سے ضمنی انتخاب میں 12000 سے زیادہ ووٹوں کے فرق سے کامیابی حاصل کی۔ مسٹر ہزاری نے راشٹریہ جنتا دل (آر جے ڈی) کے امیدوار گنیش بھارتی کو 12698 ووٹوں کے فرق سے شکست دی۔ جے ڈی یو نے اس سیٹ پر اپنی گرفت برقرار رکھی ہے۔وائی ایس آر کانگریس نے آندھرا پردیش میں بدویل سیٹ کو برقرار رکھا ہے۔ بی جے پی کے رمیش بھوسنور نے کرناٹک ضمنی انتخابات میں کانگریس کے اشوک مناگولی کو شکست دے کر سندگی سیٹ جیت لی، جبکہ ہنگل سیٹ پر کانگریس کو جیت ملی۔ مدھیہ پردیش کے کھنڈوا لوک سبھا ضمنی انتخابات اور کانگریس کے گڑھ جوبٹ (اجا) اور پرتھوی پور ضمنی اسمبلی انتخابات میں حکمراں جماعت بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) نے آج شاندار جیت حاصل کرکے ”دھن تیرس“ منایا اور کانگریس کو ریگاؤں (اجا) ضمنی انتخابات کی جیت پر ہی اکتفا کرنا پڑا۔اس طرح 3-1نتائج سے پرجوش بی جے پی کے لیڈروں اور کارکنوں نے یہاں ریاستی بی جے پی ہیڈکوارٹر میں وزیراعلیٰ شیوراج سنگھ چوہان، ریاستی بی جے پی صدر وشنو دت شرما اور دیگر لیڈروں کی موجودگی میں دھن تیرس کی پوجا کے ساتھ جیت کا جشن منایا۔ پارٹی کے ہیڈکوارٹر میں صبح سے ہی رجحانات بی جے پی کے حق میں نظر آنے پر خوشی کا ماحول نظر آیا۔ یہی نہیں کھنڈوا پارلیمانی حلقہ کے مختلف علاقوں اور نیواڑی ضلع کے پرتھوی پور اور علی راج پور ضلع کے جوبٹ اسمبلی حلقوں میں بھی بی جے پی نے جم کر جشن منایا۔کھنڈوا پارلیمانی ضمنی انتخابات میں بی جے پی کے امیدوار گیانیشور پاٹل نے 80ہزار سے زیادہ ووٹوں سے اپنے نزدیکی حریف کانگریس کے راج نارائن سنگھ کو شکست دیکر پارٹی کا قبضہ برقرار رکھا۔

The short URL of the present article is: http://harpal.in/EMdhJ

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا. ضرورت کے خانے پر* نشان لگا دیا گیا ہے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.